صدر اوباما نے ملائیشین طیارے حادثے کو عظیم سانحہ قرار دے دیا -
The news is by your side.

Advertisement

صدر اوباما نے ملائیشین طیارے حادثے کو عظیم سانحہ قرار دے دیا

یوکرائن : مبینہ طور پر میزائل حملے سے ملائشین طیارہ یوکرائن میں گرنے سےدو سو پچانوے افراد ہلاک ہوگئے، صدر اوباما نے حادثے کو خوفناک سانحہ قرار دے دیا۔

ملائیشین طیارہ بوئنگ ٹرپل سیون ایمسٹرڈیم سے کوالالمپور جارہا تھا کہ یوکرائن کی فضائی حدود میں اس پر مبینہ طور پر میزائل حملہ کیا گیا، جس کے نتیجے میں جہاز گر کر تباہ ہوا، ملائیشین طیارے ایم ایچ سیونٹین پر عملے کے پندرہ ارکان سمیت دو سو پچانوے مسافر سوار تھے، جن میں ایک سو چون ہالینڈ، ستائیس آسٹریلین، تئیس ملائشین، گیارہ انڈونیشی، چار برطانوی، جرمن اور بیلجیم کے مسافر شامل تھے۔

یوکرائنی وزارت داخلہ نے تمام افراد کی ہلاکت کی تصدیق کردی ہے، یوکرائن کا کہنا ہے کہ جس علاقے میں جہاز گرکرتباہ ہوا، وہ علاقہ روسی سرحد کے قریب ہے، جہاں روسی نواز علیحدگی پسند یوکرائن کے خلاف مزاحمت کررہے ہیں جبکہ شدت پسندوں کی جانب سے امدادی کاروائیوں میں بھی مزاحمت کا سامنا ہے۔

یوکرائن نے دعویٰ کیا ہے کہ جہاز پر میزائل حملہ روس نے کیا ہے، تاہم روسی صدرولادیمیر پیوٹن نے الزام کو مسترد کرتے ہوئے واقعے کا ذمہ دار یوکرائن حکومت کو ٹھہرایا ہے، علیحدگی پسندوں نے بھی طیارے کو نشانہ بنانےکی تردید کی ہے، امریکی صدر براک اوباما نے ملائیشا کے وزیر اعظم اور یوکرائن کے صدر سے ٹیلی فونک رابطہ کیا ہے اور صدر اوباما نے واقعے کو خوفناک سانحہ قرار دیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں