صولت مرزا کے بلیک وارنٹ ہفتے کو جاری ہونے کا امکان، عدالتی ذرائع -
The news is by your side.

Advertisement

صولت مرزا کے بلیک وارنٹ ہفتے کو جاری ہونے کا امکان، عدالتی ذرائع

کراچی : عدالتی ذرائع کے مطابق صولت مرزا کے ڈیتھ وارنٹ ہفتے کو جاری کئے جائے گے۔

عدالتی ذرائع کے مطابق مچھ جیل کے حکام کے کہنے پر سینٹرل جیل کے حکام صوالت مرزا کے ڈیتھ وارنٹ لینے انسداد دہشت گردی کی عدالت پہنچے۔ عدالتی ذرائع کا کہنا ہے کہ صولت مرزا کے ڈیتھ وارنٹ ہفتے کو جاری کئے جائے گے۔

یاد رہے کہ صولت مرزا کے ڈیٹھ وارنٹ کے لئے تیسری مرتبہ عدالت سے رجوع کیا گیا۔

گزشتہ روز شاہد حامد قتل کیس کے مجرم صولت مرزا نے سندھ ہائی کورٹ کو چار خطوط لکھے ہیں جن میں کہا ہے کہ انکی اہلیہ کو جنوبی افریقہ سے دھمکی آمیز فون آرہے ہیں، عدالت اہلیہ اور خاندان کو تحفظ فراہم کرے۔

سندھ ہائی کورٹ کو لکھے گئے خطوط میں صولت مرزا نے کہا ہے کہ ان کی اہلیہ کو جنوبی افریقہ سے دھمکی آمیز ٹیلیفون کالز آر ہی ہیں ، انکی اہلیہ کال کرنےو الوں کو جانتی ہیں۔

 اس لئےمتعلقہ ایس ایس پی ان کی اہلیہ کا بیان قلم بند کریں اورملزمان کیخلاف کاروائی عمل میں لائی جائے صولت مرزا نے مطالبہ کیا ہے کہ دھمکی آمیز کالز کرنے والوں کے کے ناقابل ضمانت وارنٹ جاری کئے جائیں۔

 انہوں نے اپنی بیوی اور اہلہ خانہ کو تحفظ فراہم کرنے کی بھی درخواست کی ہے اور کہا ہے کہ جب تک اس مسئلہ کی تفتیش مکمل نہیں ہوجاتی ان کی سزا پر عمل درآمد موخر کیا جائے۔

 سندھ ہائی کورٹ ذرائع کے مطابق عدالت کے رجسٹرار نے خط اعتراض لگا کر واپس کر دئے ہیں اور صولت مرزا سے کہا گیا ہے کہ عدالتیں خطوط پر کارروائی نہیں کرتیں، صولت مرزا عدالتی کاروائی چاہتے ہیں تو عدالتی طریقہ کار استعمال کیا جائے۔

واضح رہے کہ صولت مرزا کو 19 مارچ کو پھانسی دی جانی تھی لیکن ویڈیو بیان سامنے آنے کے بعد اس کی سزا پر عمل درآمد 72 گھنٹے کے لئے موخر کردیا گیا تھا۔ بعد ازاں اس میں ایک ماہ کی توسیع کی گئی تھی۔

صولت مرزا کو 1999 ء میں چوہدری اسلم شہید نے گرفتار کیا تھا، جس کے بعد صولت مرزا کو عدالت نے کے ای ایس سی کے ایم ڈی اور ان کے ساتھیوں کے قتل کے جرم میں پھانسی کی سزا سنائی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں