site
stats
سندھ

ضلع بدین کا قدیم فٹبال گراؤنڈ تباہ حالی کا شکار

بدین :صحت مند تفریح معاشرے میں سدھار کے لئے نہایت ہی ضروری ہے اور اگر نوجوانوں سے تفریح چھین لی جائے تو معاشرتی برائیاں جنم لیتی ہیں ۔کھیل ایسی تفریح ہے جو کہ بچوں اور بوڑھوں میں یکساں مقبول ہے۔

ضلع بدین کا قدیم ریلوے فٹبال گراؤنڈ 40 سال قبل ریلوے کی جانب سے بدین کے نوجوانوں کو صحت مند تفریح فراہم کرنے کے لئے بنایا گیا تھا۔ ضلع بدین میں آل فرینڈز فٹبال کلب کے زیر اہتمام ضلع بدین کے نوجوانوں پر مشتمل فٹبال ٹیمیں ملکی اور سندھ لیول پر ٹورنامنٹ میں حصہ لے چکی ہیں۔

ضلع بدین کی ٹیمیوں کا روایتی حریف لیاری فٹبال ٹیم ہوتی تھی جسے ہرانا باعث فخر سمجھا جاتا تھا۔ گزرتے زمانے کے ساتھ اس فٹبال گراؤنڈ میں مونسپل انتظامیہ کی جانب سے شہر کا گندہ پانی چھوڑنے کا سلسلہ شروع کیا گیا جس کی وجہ سے اب یہ گراؤنڈ گندے پانی کے جوھڑ میں تبدیل ہو چکا ہے۔

وہ نوجوان جو کہ کبھی ضلع بدین کی پہچان ہوا کرتے تھے اب نشے کی لت میں مبتلا ہو چکے ہیں اور تمام ہی پرانے کھلاڑی اب پان گٹکے کا نشہ استعمال کرتے ہیں۔

انتظامیہ نااہلی کے باعث اس قیمتی گراؤنڈ پر گڈز ٹرانسپوٹ مافیا کی جانب سے قبضہ کرنے کی کوشش بھی شروع ہو چکی ہے، جبکہ مونسپل کمیٹی میں شامل کالی بھیڑیں بھی اس اربوں روپے مالیت کے قیمتی فٹبال گراؤنڈ پر قبضے کی خواہش مند ہیں۔

افسوس کا پہلو یہ بھی ہے کہ سابق وزیر داخلہ سندھ نوجوانوں کے پروگراموں اور جلسوں میں بار بار اس گرائونڈ میں مٹی ڈلوانے کا وعدہ کر چکے ہیں لیکن تاحال یہ وعدہ وفا نہیں ہوسکا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top