عدنان رشید زخمی حالت میں گرفتار،طالبان کی تصدیق -
The news is by your side.

Advertisement

عدنان رشید زخمی حالت میں گرفتار،طالبان کی تصدیق

 وزیرستان: کالعدم تحریک طالبان پاکستان نے سابق صدر پرویزمشرف پر حملے کے مرکزی ملزم عدنان رشید کی گرفتاری کی تصدیق کردی، عدنان رشید بنوں جیل سےفرار ہوا تھا۔

مشرف حملہ کیس کے مرکزی ملزم عدنان رشید کو جنوبی وزیرستان کے علاقےشکئی سے زخمی حالت میں پکڑا گیا، ذرائع کے مطابق آپریشن ضرب عضب شروع ہونے پرعدنان رشید شمالی وزیر ستان سے فرارہوگیا تھا، کالعدم طالبان پاکستان نے اپنے کمانڈرکی گرفتاری کی تصدیق کردی۔

عدنان رشید کو دو ہزار پانچ میں فوجی عدالت نے پرویز مشرف پر حملے کا جرم ثابت ہونے پرموت کی سزا سنائی تھی لیکن سزا پرعمل ہونے سے پہلے ہی دو ہزار بارہ میں طالبان نے بنوں جیل پر حملہ کرکے اُسے ساتھیوں سمیت چھڑوا لیا تھا، صوابی سے تعلق رکھنے والاعدنان رشید ایئرفورس کا سابق ملازم ہے۔

جسےمشکوک سرگرمیوں پر نوکری سے نکال دیا گیا تھا، بعد میں عدنان رشید کالعدم تحریک طالبان کا حصہ بن گیا،عدنان رشید کو دوہزار تیرہ میں ڈیرہ اسماعیل خان جیل پر حملے کا ماسٹر مائنڈ بھی کہا جاتا ہے، اس حملےمیں پونے دو سو قیدی بھاگ نکلے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں