site
stats
آزادی مارچ

نوازشریف30نومبرسےپہلے مستعفی ہونیکا فیصلہ کرلیں، عمران خان

گجرات: عمران خان نےکہا کہ تیس نومبرکو اسلام آباد کے جلسے میں فیصلہ کن جنگ ہو گی، نواز شریف فیصلہ کر لیں تیس نومبر سے پہلے استعفیٰ دینا ہے یا نہیں۔

گجرات میں جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین  عمران کا کہنا تھا کہ آپ سب کا شاندار استقبال پر شکریہ ادا کرتا ہوں،خصوصی طور پر خواتین کا شکریہ ادا کرتا ہوں، کسی کو پیسے نہیں دیئے سب لوگ خود آئیں ہیں ۔

ان کا کہنا تھا کہ آپ کا جنون دیکھ کر مجھے نیا پاکستان ںظر آرہا ہے، مولانا فضل الرحمان پر حملہ ہونے پر افسوس ہوا، لیکن جو مولانا صحاب نے پی ٹی آئی کی خواتین کے خلاف بیان دیا اس پر دکھ ہوا، ان کا کہناتھا کہ مولانا صحاب! جو لوگ آپ کی وجہ سے اسلام سےدور ہیں ہم انہیں واپس لے کر آئیں گے ۔

عمران خان نے کہا کہ طاہرالقادری کا شکریہ انہوں نے ہمارے ساتھ 60 دن گزارے ہیں، ان کے مقاصد الگ تھے، ہمارے الگ تھے ، ان کا کہنا تھا کہ میں عوامی تحریک کے کارکنان کو کبھی نہیں بھول سکتا انہوں نے جس حوصلے اور جذبے سے نواز شریف کے گلو بٹوں کا مقابلہ کیا وہ قابل تعریف ہے ۔

پی ٹی آئی چیئرمین نے کہا کہ نواز شریف اور خورشید شاہ سن لو! میں دھرنا ختم نہیں کروں گا، جب تک نواز شریف کا استعفیٰ نہیں ملے گا ، میں دھرنا ختم نہیں کروں گا ، مجھے پتا تھا پاکستانی قوم فیصلہ کرچکی ہے، 5 دن کے نوٹس پر مینار پاکستان پر جلسہ کیا تو مجھے پتا تھا لوگ نکلیں گے کیونکہ قوم جاگ گئی ہے ، جو یہ سمجھتے ہیں کہ میں دھرنہ ختم کردوں گا، وہ مجھے نہیں جانتے،میں آخری گیند تک مقابلہ کرنے والا ہوں ۔

انہوں نے بتایا کہ جب ہم دھرنے کے لئے نکل رہے تھے تو میں نے کورکمیٹی سے کہا تھا کہ نواز شریف کے استعفیٰ کے بغیر واپس نہیں آوٗں گا ،اگر یہ وقت آگیا کہ لوگ تھک جائیں ، اور وسائل کی کمی بھی ہوگئی تو میں اکیلا ہی بیٹھا رہوں گا لیکن دھرنا ختم نہیں کروں گا، دنیا میں 72 دن دھرنے کی کوئی مثال نہیں ملتی۔ ،

عمران خان اعلان کیا کہ 30نومبر کو سارے پاکستان کے لوگوں کو  اسلام آباد دھرنے میں آنے کی دعوت دیتا ہوں ،پاکستان کی تاریخ کے سب سے زیادہ لوگ اسلام میں آئیں گے، 30نومبر کو عوام کا سمندر اسلام آباد پہنچے گا،  پُرامن احتجاج اور دھرنے جاری رہیں گے

انہوں نے کہا کہ یہ وقت کشمیروں کو حقوق دینے کا وقت ہے ، یہ وقت غربت ختم کرنے کا وقت ہے ، بھارت سے تعلقات بہتر کرنا ہونگے، کشمیر کا مسلئہ حل ہوجائے تو غربت ختم ہوسکتی ہے، نواز شریف اور اس کے خاندان کرپشن کا کیس، ٹیکس چوری کا کیس ہے پھر بھی وہ الیکشن لڑھ رہے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top