site
stats
پاکستان

عوام قبائلی اورجاگیردارانہ نظام میں زندگی گذاررہے ہیں، خالد مقبول صدیقی

کراچی: ایم کیو ایم کے ڈپٹی کنوینر ڈاکٹر مقبول صدیقی کہتے ہیں کہ جس معاشرے میں زندہ ہیں وہاں عدالتیں گونگی نہیں بلکہ اندھی اور بہری بھی ہیں۔

نائن زیرو پرایم کیو ایم شعبہ خواتین کے زیرِاہتمام کتاب کی رونمائی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹرخالد مقبول صدیقی کاکہنا تھا کہ اس وقت عوام قبائلی اورجاگیردارانہ نظام میں زندگی گذار رہے ہیں، دیہی علاقے کے وڈیرے سڑسٹھ سالوں سے شہری علاقوں میں حکومت کررہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ طبقاتی نظام تعلیم نے ملک کو تباہ کردیا ہے، ملک میں جاگیر دارانہ نظام ہوگا تو تعلیم کہاں سے آئے گی، خالد مقبول صدیقی نے کہا کہ جس ملک کو ملت اسلامیہ کا ممبر ہونا چاہیے وہ اب منڈی بن کر رہ گیا ہے، بہترین معاشرہ وہ ہے جہاں ظلم نہ ہو اور انصاف مہیا کیا جائے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top