The news is by your side.

Advertisement

غیر ملکی خبر ایجنسی کی بیوروچیف کی موت طبعی تھی، فرانزک رپورٹ

اسلام آباد: ماریہ کی فرانزک رپورٹ وفاقی پولیس اورپمز انتظامیہ کے حوالے کر دی گئی ہے، ماریہ گلوونینا کوتیئیس فروری کو نیم مردہ حالت میں پمز اسپتال منتقل کیا گیا تھا۔

ذرائع سے اے آر وائی نیوز کو موصول ہونے والی رپورٹ نے ماریہ کی طبعی موت کی تصدیق کر دی،رپورٹ کے مندرجات کے مطابق ماریہ گلوونینا معدے، جگر ،بڑی آنت کے نمونوں میں کسی نشہ آور یازہریلی اجزاء کی تصدیق نہیں ہوئی،ماریہ کے دل کی شریانیں سکڑی ہوئی تھیں جب کہ پھیپڑے کی شریانوں میں رکاوٹ پائی گئی تھی۔

رپورٹ کے مطابق وفاقی پولیس کی جانب سے پنجاب فرانژک سائنس ایجنسی لاہور کو ٹیسٹ کیلئے ماریہ کا مکمل دل ،پھیپڑے کے دو حصوں سمیت معدے،جگر اور بڑی آنت کے نمونے بھجوائے گئے تھے، لیبارٹری میں ماریہ کے فرانژک ہسٹو پیتھالوجی اور فرانژک ٹوکسی کالوجی انلائسز،نامی ٹیسٹ کئے گئے ۔

ذرائع کے مطابق ماریہ گلوونینا کی فرانژک رپورٹ وفاقی پولیس سمیت پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل انتظامیہ کے حوالے کر دی گئی ہے ۔روسی نژاد خاتون صحافی ماریہ گلوونینا 23فروری کواسلام آباد میں اپنے فلیٹ پر نیم مردہ حالت میں ملی تھیں جنہیں پمز ہیپتال منتقل کیا گیا تھا جہاں وہ دم توڑ گئی تھیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں