The news is by your side.

Advertisement

قانون نافذ کرنے والے اداروں کوکسی سے ڈکٹیشن لینے کی ضرورت نہیں، شرجیل میمن

کراچی : سندھ کے وزیراطلاعات شرجیل میمن نے کہا ہے کہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کو کسی سے ڈکٹیشن لینے کی ضرورت نہیں، ٹارگٹڈ آپریشن کسی جماعت کے خلاف نہیں۔

سندھ اسمبلی اجلاس سے قبل میڈیا سے بات کرتے ہوئے شرجیل میمن کا کہنا تھا کہ کراچی کے دھرنے کامیاب مذاکرات کے ذریعہ ختم کرائے گئے ، ہم نے پہلے ہی کہا تھا کہ مسائل کا حل مذاکرات میں ہی ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ زہرہ شاہد کا کیس کافی عرصہ سے قانون نافذ کرنے والے ادارے حل کرنے کی کوشش کررہے تھے، گذشتہ روز ان کے قاتل گرفتار کرلیے گئے ہیں، ان کا تعلق کس جماعت سے ہے نام نہیں لوں گا۔

انہوں نے کہا ہے کہ ٹارگٹڈ آپریشن کسی جماعت کے خلاف نہیں ہورہا، اگردیکھا جائے تو سب سے زیادہ پیپلزپارٹی کے قلعہ لیاری میں ٹارگٹڈ آپریشن ہوا ہے، تحفظات کے باوجود شہرمیں قیام امن کے لیے سب کچھ برداشت کررہے ہیں۔

شرجیل میمن کا کہنا تھا کہ سندھ کی تقسیم کے خلاف ایوان کی جانب سے قرارداد منظورکرنے کے بعد نئے صوبے کے مطالبات کوئی اہمیت نہیں رکھتے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں