site
stats
اہم ترین

قومی اسمبلی کا اجلاس، 21ویں آئینی ترمیم کی منظوری آج ہوگی

اسلام آباد: قومی اسمبلی کا اجلاس آج ہوگا، دہشت گردی سے نمٹنے کیلئے آرمی ایکٹ اورآئین میں اکیسویں ترمیم کیلئےشق وار منظوری اسمبلی سے آج لی جائے گی۔

دہشتگردوں کے خلاف ایکشن کیلئے قومی پلان پر تیزی سےعملدرآمد جاری ہے، اکیسویں آئینی ترمیم اور آرمی ایکٹ انیس سو باون میں ترمیم کی ممکنہ منظوری کیلئےقومی اسمبلی کا اجلاس آج شام چار بجے ہوگا۔

اجلاس کیلئے ضمنی ایجنڈا کے مطابق فوجی عدالتوں کے قیام اوراکیسویں آئینی ترمیمی بلز پر آج شق وار منظوری لی جائے گی۔

ہفتے کو قومی اسمبلی کے اجلاس میں وفاقی وزیرِ قانون پرویز رشید نے آئینی ترمیم اور آرمی ایکٹ میں ترمیم کا بل پیش کیا تھا، آرمی ایکٹ میں ترمیم کی منظوری کے لیے ایوان میں موجود ارکان کی اکثریت جبکہ آئینی ترمیم کی منظوری کے لیے ایوان کی کل تعداد کی دوتہائی اکثریت یعنی 228ارکان کی حمایت درکار ہوگی۔

قومی اسمبلی سے منظوری کے بعد بل ایوان بالا یعنی سینیٹ میں بھیجا جائے گا اور وہاں سے منظوری لی جائے گی۔

واضح رہے کہ آرمی ایکٹ میں ترمیم کے تحت فوجی عدالتوں کو دہشت گردی یا ملک دمشن سرگرمیون میں ملوث عناصر کے مقدمات بھیجنے کا اختیار وفاقی حکومت کو ہوگا۔

اکیسویں ائینی ترمیم کے تحت آئین کے فرسٹ شیڈول میں ترمیم تجویز کی گئی ہے، فرسٹ شیڈول میں پاکستان آرمی ایکٹ 1952پاکستان ایئر فورس ایکٹ 1953 پاکستان نیوی ارڈیننس ایکٹ1961 اورتحفظ پاکستان ایکٹ2014کو شامل کیا گیا ہے، آئین کے ارٹیکل 175میں بھی ترمیم کی جائے گی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top