site
stats
پاکستان

لاہور ہائی کورٹ: پھانسی پانے والے قیدی کی سزا عمر قید میں تبدیل

لاہور: لاہور ہائی کورٹ نے قتل کے الزام میں پھانسی پانے والے قیدی کی سزا عمر قید میں تبدیل کر دی جبکہ اغوا برائے تاوان میں عمر قید پانے والے دو ملزموں کو بری کر دیا۔

ہائی کورٹ کے دو رکنی بنچ نے کیس کی سماعت کی، سزائے موت پانے والے پرویز کی جانب سے مؤقف اختیار کیا گیا کہ ماتحت عدالت نے ناکافی ثبوتوں اور کمزور شہادتوں کے باوجود پھانسی کی سزا سنائی، جو انصاف کے منافی ہے لہذا سز اکو کالعدم قرار دیا جائے ۔

عدالت نے اپیل کی سماعت کے بعد پھانسی کی سزا کو عمر قید میں تبدیل کر دیا۔

ملزم پر الزام ہے کہ اس نے ننکانہ صاحب میں ہنگامہ آرائی کے دوران ایک شخص کو قتل کر دیا تھا۔

عدالت نے اغوا برائے تاوان کے چار ملزمان سلطان ، مجاہد ، عبدالمتین اور سلیم کی اپیلوں کی سماعت کرتے ہوئے مجاہد اور سلیم کو بری کر دیا جبکہ سلطان اور عبدالمتین کی عمر قید کی سزا برقرار رکھی۔

ملزمان کو دوہزار نو میں اظہر نامی شہری کو اغواء کر کے آٹھ لاکھ تاوان لینے کے الزام میں عمر قید کی سزا ہوئی تھی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top