site
stats
عالمی خبریں

ماہ صیام میں بھی برما کے مسلمان بے یارومددگارامداد کے منتظر

برما:  رمضان کے مقدس مہینے میں بھی برما کے مسلمانوں کے لئے پریشانیوں اورمصیبتوں کا سلسلہ ختم نہیں ہوا، برما کے سرحدی علاقوں کے جنگلوں میں پناہ گزین کسمپرسی کی زندگی گزارنے والے برمی مسلمان امداد کے منتظرہیں۔

برما کے مظلوم اور بے کس مسلمان رمضان المبارک میں بھی جان کے خوف سے دربدر بھٹکنے پر مجبور ہیں، برما، ملائیشیا اور تھائی لینڈ کے سرحدی علاقوں میں کیمپوں میں کسمپرسی کی زندگی گزارنے والے برمی مسلمان اپنی مشکلوں پرنوحہ کناں ہیں۔

بنیادی سہولتوں سے محروم برما کے مسلمان باعزت زندگی گزارنے کے لئے عالمی برادری کی امداد کے منتظر ہیں۔

ایک اندازے کے مطابق برما میں نسل کشی کے شکار 4 ہزار سے زائد روہینجا مسلمان جان بچانے کے لئے کھلے سمندر کی طرف نکل چکے ہیں اور ان میں سے اب تک درجنوں بھوک، بیماری اور موسمی سختیوں کی وجہ سے ہلاک ہو چکے ہیں، جبکہ کوئی بھی ملک انہیں اپنی سرحد میں داخل ہونے کی اجازت دینے پر تیار نہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top