The news is by your side.

Advertisement

متحدہ رہنماؤں کوطالبان کی جانب سے بھتے کی پرچیاں موصول

کراچی : بھتہ مافیا کراچی میں بے قابو ہوگئی، کالعدم تنظیم نے ایم کیو ایم کے رہنماؤں کو بھی بھتے کی پرچیاں بھیج دیں،ایم کیوا یم کے رہنما فاروق ستار کہتے ہیں کہ کالعدم تنظیم کی جانب سے ایم کیوایم کو سیاسی سرگرمیاں بند کرنے کی بھی دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیوایم رابطہ کمیٹی کےمتعدداراکین کوبھتے کی پرچیاں موصول ہونے رابطہ کمیٹی نے اظہار تشویش اور مذمت کا اظہار کیا ہے رابطہ کمیٹی کے ڈپٹی کنوینئر ڈاکٹر فاروق ستار نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئےکہا کہ ایم کیو ایم اور قائد تحریک الطاف حسین کو طالبان کیخلاف بولنے پر دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔

کالعدم تنظیم نے بھتہ نہ دینے کی صورت میں حملوں کی دھمکی دی ہے اوراراکین سے 5سے25لاکھ روپے تک بھتہ مانگاگیا ہے،انہوں نے بتایا کہ ’’تحریک طالبان زندہ باد‘‘  کے لیٹر ہیڈ پر نائن زیرو کے پتے پرخط موصول ہوا ہے،مذکورہ خط رابطہ کمیٹی کے گیارہ اراکین کے نام بھیجا گیا ہے جس میں خالد مقبول صدیقی، ڈاکٹر فاروق ستار، بابر غوری، حیدر عباس رضوی، نسرین جلیل ودیگر شامل ہیں۔

خط میں کہا گیا ہے کہ جس طرح آئی ڈی پیز کی امداد کی جا رہی ہے اسی طرح طالبان رہنماؤں اور شہیدوں کے اہل خانہ کی بھی کفالت کی جائے اور اس سلسلے میں رقوم کی ادائیگی ان افرادکو کی جائے جن کے فون نمبرز مذکورہ خط میں درج کئے گئے ہیں۔

فاروق ستار نے کہا کہ طالبان کی جانب سے پانچ سے پچیس لاکھ روپے تک کی رقم کا مطالبہ کیا گیا ہےاور یہ دھمکی دی گئی ہے کہ اگر رقم کا بندوبست نہ کیا گیا تو مذکورہ اراکین کہ جہنم واصل کر دیا جائے گا۔

ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ  یہ خط پندرہ ستمبر کو موصول ہوا تھا اوررابطہ کمیٹی نے ایک ماہ قبل حکام بالاکوآگاہ کردیا تھا جس کے باوجود کوئی نوٹس نہیں لیاگیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں