The news is by your side.

Advertisement

مشرف کی رہائش گاہ کے قریب بارودی مواد ملنے کا وزیراعظم نے نوٹس لے لیا

سابق صدر پرویز مشرف کی رہائش گاہ کے قریب دھماکا خیز ملنے کی خبرکا نوٹس لیتے ہوئے وزیراعظم نوازشریف نے تحقیقات کا حکم دے دیا۔

سابق صدر پرویز مشرف رہائش گاہ کے قریب سے بارودی مواد ملنے کا وزیر اعظم نے نوٹس لیتے ہوئے وزارت داخلہ سے رپورٹ طلب کرلی، وزیراعظم نے وزارت داخلہ کو ہدایات جاری کیں ہیں کہ سابق صدر مشرف کی عدالت میں پیشی کو یقینی بنایا جائے۔

سابق صدرکو عدالت کے سامنے پیش ہونے کے لئے جس راستے سے گزرنا ہے، اس میں بہت سی اہم عمارات ہیں، چک شہزاد سے خصوصی عدالت کے درمیان سپریم کورٹ کی عمارت ہے، تھوڑے ہی فاصلے پر مختلف ممالک کے سفارتخانے ہیں۔

جہاں بڑی تعداد میں ملکی و غیرملکی افراد پر مشتمل عملہ بین الاقوامی روابط کے لئے خدمات انجام دے رہے ہیں، اس سے تھوڑے فاصلے پر سرینا ہوٹل کی عمارت ہے، جہاں غیرملکیوں اوربیوروکریٹس کی بڑی تعداد موجود ہوتی ہے، خصوصی عدالت کے راستے میں اسلام آباد کلب بھی ہے۔

سابق صدرکی عدالت حاضری اور ممکنہ دہشتگردی حملے کے سبب ان مقامات کی سیکیورٹی کو بھی خطرات لاحق ہیں، ایک ہفتے کے دوران سابق صدرکی رہائش گاہ کے اطراف سے دھماکا خیز مواد ملنے کے تین واقعات رونما ہوچکے ہیں، صدر مشرف کی دو پیشیوں کے موقع پر اس گزرگارہ سے پہلے بھی دوبار بارودی مواد ملا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں