ملتان مسلم لیگ ن کا لاہور سے بھی بڑا قلعہ ہے، جاوید ہاشمی -
The news is by your side.

Advertisement

ملتان مسلم لیگ ن کا لاہور سے بھی بڑا قلعہ ہے، جاوید ہاشمی

ملتان: جاوید ہاشمی کا کہنا ہے کہ ابھی بھی اس ملک کو غیر مستحکم کرنے کا عمل جاری ہے اور میں ملک کو غیر مستحکم کرنے والی قوتوں کو کنٹینر کی بجائے ووٹ سے جواب دینا چاہتا ہوں۔

ملتان میں اپنی رہائشگاہ پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ نواز کے نوجوان گو نواز گو کے نعرے برداشت کرنے کو تیار نہیں ہیں کنٹینروں پر بیٹھے ہوئے لوگوں کو عدم تشدد سے جنگ جیتنی چاہیئے، جاوید ہاشمی کاکہنا تھا کہ ن لیگ یوتھ مجھ سے کنٹرول نہیں ہورہے اگرمیاں نوازشریف میری مدد کرنا چاہتے ہیں تو خدارا اپنے شیروں کو کنٹرول کریں ہم امن کی فضا قائم رکھنا چاہتا ہوں، ان کا کہنا تھا کہ ایک جلسے میں کسی نے نعرہ لگایا تو ن والوں نے اسے مارنا شروع کردیا میری مداخلت کی وجہ سے نقصان ہونے سے بچ گیا ،انہوں نے کہا کہ ملتان مسلم لیگ ن کا لاہور سے بھی بڑا قلعہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی نے انتخابات میں حصہ نہ لینے کا اعلان کیا لیکن ملتان میں انتخابی جلسہ کررہے ہیں ان کا کہنا تھا کہ میں شاہ محمود قریشی سے بھی ووٹ مانگوں گا اور میں تو ان کے گھر پر گیا بھی گیاتھا لیکن دروازہ بند تھا دروازہ اس لیئے نہ کھٹکھٹایا کہ کہیں وہ یہ نہ کہیں کہ دروازہ توڑ دیا ہے اور میڈیا مجھے بلو بٹ ہی نہ بنا دے۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ آپ میڈیاوالے شیخ رشید کو مناظرےکے بجائے پریس کلب کے کسی کمرے میں میرے ساتھ تو بٹھا دیں، رائے ونڈ میں 42 میٹر لگنے کے سوال پر ان کا کہنا تھا کہ ان میٹروں کا جواب رائے ونڈ والے خود ہی دیں گے انہوں نے کہا کہ میرا مسلم لیگ ن میں شامل ہونے کا کوئی ارادہ نہیں ہے اگر منتخب ہوا تو میاں نوازشریف سے اس خطے کے ترقیاتی کام ضرور کروائوں گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں