The news is by your side.

Advertisement

ملتان میں 3 بچوں کے قتل میں ملوث سوتیلی ماں سمیت 3 ملزمان کو سزائے موت

ملتان: ایڈیشنل سیشن جج نے 3 کمسن بہن بھائیوں کے قتل میں ملوث سوتیلی ماں سمیت 3 ملزمان کو مجموعی طور پر دو مرتبہ سزائے موت، 35 سال قید اور 2 لاکھ روپے جرمانے کی سزا کا حکم سنا دیا۔

فاضل عدالت میں تھانہ سیتل ماڑی کے استغاثہ کے مطابق 15 فروری، 2012 کو محمد فاروق نے مقدمہ درج کرایا کہ اس کی بیوی اور 3 بچے گھر سے غائب ہوگئے ہیں۔

بعد ازاں نہرسے بچوں کی لاشیں اور بے ہوشی کی حالت میں بیوی کو نکالا گئیں، مزید تفتیش پر معلوم ہوا کہ مدعی مقدمہ نے 2 شادیاں کررکھی تھیں اور دوسری بیوی رضیہ بی بی علیحدہ رہتی تھی جس سے کوئی اولاد نہیں تھی جس نے مالک مکان لیاقت اور اس کے بیٹے اویس علی نے ساتھ ملکر مدعی کے ایکسیڈنٹ کی جھوٹی اطلاع دیکر پہلی بیوی اور 3 بچوں کو گاڑی میں لے گئے اور نہرمیں پھینک کر فرار ہوگئے تھے۔

فاضل عدالت نے جرم ثابت ہونے پرملزمان رضیہ بی بی، لیاقت اوراویس کو دو دو مرتبہ سزائے موت 35 سال قید اور 2 لاکھ روپے جرمانے کی سزا کا حکم سنا دیا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں