مولاناعبدالعزیزکو ایف آئی آر کی روشنی میں گرفتارکیا جائے، الطاف حسین -
The news is by your side.

Advertisement

مولاناعبدالعزیزکو ایف آئی آر کی روشنی میں گرفتارکیا جائے، الطاف حسین

کراچی: ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے ہم اپنے اتحاد اور دہشت گردوں کے خلاف ہمت وجرات کا مظاہرہ کرکے ملک کومضبوط اورمستحکم بنا سکتے ہیں۔

متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے سیاسی وعسکری قیادت پر زور دیا ہے کہ ملکی و بین الاقوامی تناظر کی روشنی میں مذہبی منافرت اور فرقہ واریت کے خاتمہ کیلئے ہرقسم کی مصلحت کو بالائے طاق رکھ کرجرات مندانہ فیصلے کیے جائیں ۔

الطاف حسین کا کہنا تھا پاکستان کو مضبوط ومستحکم بنانے کیلئے آسمان سےفرشتے نہیں اتریں گے ہمیں ہی اپنے اتحاد اور ہمت سے دہشت گردوں کو شکست دینی ہے،حکومت کا فرض ہے کہ ان مسلح حملہ آوروں کو فی الفور گرفتارکرکے ان کے مکمل کوائف کے ساتھ میڈیا کے سامنے پیش کیاجائے۔

ایم کیوایم کے قائد نے اپنے بیان میں حکومت سے مطالبہ کیا کہ سلمان تاثیر کی برسی کے تقریب پرحملہ کرنے والوں کو گرفتار کرکے انھیں سزا دی جائے، لال مسجد کے خطیب کے خلاف ایف آئی آر کی روشنی میں انہیں فی الفورگرفتارکیا جائے، ذکی الرحمان لکھوی کے حوالہ سے ٹھوس لائحہ عمل تیارکیا جائے،  کالعدم تنظیموں کی نفرت انگیز تبلیغ اوران کے سربراہوں کی تقاریر پرفی الفور پابندی عائد کی جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ جوکالعدم جماعتیں مذہبی منافرت پھیلانے، فرقہ وارانہ فسادات کرانے اورفرقہ واریت کی بنیاد پر قتل کرنے کا حکم دینے میں ملوث ہیں ان خلاف فلفور کاروائی کی جائے۔

دوسری جانب ذرائع کے مطابق حکومت نے لال مسجد کے خطیب مولانا عبد العزیز کے خلاف کاروائی نہ کر نے کا فیصلہ کیا ہے،حکومتی ذرائع کا کہنا ہے کہ مولانا عبد العزیز نے سانحہ پشاور بیان پر معذرت کر لی ہے اور وہ شامل تفتیش ہو نے کو تیار ہیں ذرائع نے بتایا کہ حکومت مولانا عبد العزیز سے متعلق کوئی نیامحاذ نہیں کھولنا چاہتی،

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں