site
stats
سندھ

نجی اسپتال کی ڈاکٹر نے مریضہ کی جان خطرے میں ڈال دی

کراچی: نجی اسپتال میں خاتون ڈاکٹرآپریشن کرتے ہوئےمریضہ کےپیٹ میں تولیہ اوراسپنج بھول گئیں، بے رحم ڈاکٹرخاتون کی زندگی خطرے میں ڈالنےکےباوجودصرف درد کم کرنے کی دوائیاں دیتی رہیں۔

ڈاکٹروں کی لاپرواہی غفلت اوربے حسی کاایک اورواقعہ سامنےآگیا کراچی کےنجی اسپتال میں ایک خاتون کاآپریشن کیا گیا لیکن تکلیف کم نہ ہوئی،ڈاکٹرسے شکایت کی گئی تووہ پین کلردے دے کردردکم کرنے کی کوشش کرتی رہیں۔

مریضہ درد سےتڑپتی رہی توگھروالوں نے دوسرے ڈاکٹروں سےمشورہ کیا،اس وقت انکشاف ہوا کہ جس ڈاکٹرسےآپریشن کرایاتھاوہ پیٹ میں تولیا بھول گئیں مریضہ کی بہن کےمطابق نہ صرف خاتون ڈاکٹرنےزندگی خطرےمیں ڈالی بلکہ اپنےغلطی پرکہا کہ انسان سے غلطی ہوجاتی ہے۔

پیٹ سےتولیہ نکل جانےپرمریضہ خطرےسےتوباہرہیں لیکن جسمانی اورذہنی ازیت دینےپرنجی اسپتال نےکوئی ازالہ نہیں کیا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top