وزیراعظم نوازشریف سےچوہدری نثاراور خواجہ سعد رفیق کی ملاقات -
The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم نوازشریف سےچوہدری نثاراور خواجہ سعد رفیق کی ملاقات

اسلام آباد : وزیراعظم نواز شریف نے آزادی مارچ اور عوامی تحریک کے انقلاب سے قبل مری میں رفقاء سے صلاح مشورے شروع کردیئے۔

تحریک انصاف کےآزادی مارچ اورعوامی تحریک کےانقلاب نےن لیگ کی قیادت کوایک بار پھرسرجوڑنےپرمجبورکردیا، مری میں وزیراعظم نواز شریف سےوزیرداخلہ چوہدری نثار،وفاقی وزیراطلاعات پرویز رشیداور خواجہ سعدرفیق نےملاقات کی، ملاقات میں سیاسی صورتحال،پی ٹی آئی کےآزادی مارچ سمیت اہم امور پرتبادلہ خیال کیا گیا۔

 وزیراعلی پنجاب شہباز شریف، وفاقی وزرا چوہدری نثار علی خان، خواجہ سعد رفیق، اسحاق ڈار اور پرویز رشید نے شرکت کی، اجلاس میں انقلاب مارچ اور آزادی مارچ سمیت ملک کی مجموعی سیاسی اورا من وامان کی صورتحال پر غور کیا گیا، اس کے علاوہ تیرہ اور چودہ اگست کی درمیانی رات یوم آزادی کی تقریبات پر بھی تبادلہ خیال ہوا، نواز شریف نے اجلاس کو بتایا کہ وہ آئندہ چند روز میں سیاسی جماعتوں کی قیادت کو یوم آزادی کی تقریبات میں شرکت کی خود دعوت دیں گے۔

اس سےقبل پرویز رشید کااپنے بیان میں کہنا تھا کہ عمران خان کااصل ایجنڈا انتخابی اصلاحات نہیں بلکہ جمہوری حکومت کاتختہ الٹناہے، عمران خان تمام صوبوں کی اسمبلیاں توڑکر اقتدارحاصل کرنا چاہیتےہیں،وزیراعلی پنجاب بھی کہاں پیچھےرہنےوالےتھے،مری میں مسلم لیگ ن کےوفودسےملاقات کے دوران کہا کہ ملک اس وقت جن حالات سےگزر رہاہےان کومدنظر رکھتےہوئےاحتجاجی سیاست کسی صورت مناسب نہیں، یہ وقت اتحاداوراتفاق کاہے۔

سابق صوبائی وزیر قانون رانا ثنااللہ نےفیصل آباد میں میڈیا سےبات کرتےہوئےکہاکہ چودہ اگست کو پارلیمنٹ پر چڑھائی کرکےعمران خان اپنےسیاسی ڈیتھ وارنٹ پردستخط کردیں گے،ملک دہشت گردی اور اندھیروں میں ڈوبا ہوا ہے،پی ٹی آئی آپریشن ضرب عضب کی تکمیل کاانتظارکرے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں