site
stats
اہم ترین

پارلیمنٹ کی حفاظت کیلئے متحد ہیں، آفتاب شیر پاؤ

اسلام آباد : قومی وطن پارٹی کے سربراہ اور رکن قومی اسمبلی آفتاب احمد خان شیر پاؤ نے کہا ہے کہ ہمارے آپس میں لاکھ اختلافات صحیح مگر وزیراعظم استعفیٰ نہیں دیں گے اور نہ ہی استعفیٰ دے سکتے ہیں،اگر کسی کو استعفے کی بات کرنی ہے تو وہ آکر پارلیمنٹ سے بات کرے،تمام ارکان پارلیمنٹ کی حفاظت کیلئے متحد ہیں ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ ہم پارلیمنٹ کا تقدس پامال نہیں ہونے دیں گے،وزیر اعظم مزید چار سال اپنی کرسی پر بیٹھیں گے۔ ،

ان کا کہنا تھا کہ ایوان کے باہر تماشا لگا ہوا ہے اور آئی ڈی پیز کی کسی کو پرواہ نہیں،ملکی تاریخ میں آج تک کسی سیاسی جماعت نے پی ٹی وی پر حملہ نہیں کیا،میں پی ٹی وی پر حملہ کرنے والوں کی شدید الفاظ میں مذمت کرتا ہوں۔

میں عدالت کا راستہ روکنے والوں،سپریم کورٹ کی دیوار پر کپڑے لٹکانے والوں ،پارلیمنٹ کو بوگس کہنے والوں اور صحافیوں پر حملے کرنے والوں کی پرزور مذمت کرتا ہوں،وزیر اعظم پر بھروسہ نہ کرنے والے بھی قابلِ مذمت ہیں کیوںکہ ان کا یہ اقدام عدالت پر عدم اعتماد کا اظہار ہے۔

آفتاب شیر پاؤ نے کہا کہ دھرنے والوں کی کشتی سے لوگوں نے نکلنا شروع کردیا ہے،ایک دن کی شیلنگ کے بعد شام کی محفلیں ختم ہو گئیں ہیں، انہوں نے عمران خان اور طاہرالقادری کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ وکٹری کا نشان بناتے ہوئے گھر جائیں اور وزیر اعظم کے استعفے کو بھول جائیں۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان اپوزیشن لیڈر بن نہیں سکے لیکن وزیراعظم بننے کے خواب دیکھ رہے ہیں تحریک انصاف کے اندرجمہوریت نہیں ہے،پہلے صدر کو فارغ کیا اور پھر بعد میں شوکاز نوٹس جاری کیا گیا۔،

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top