site
stats
پاکستان

پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز کی نجکاری کاعمل 22جولائی سے شروع

اسلام آباد:حکومت نے پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنزکی نجکاری کیلئےتاریخیں دے دی ہیں،قومی ادارے کے قیمتی اثاثےہی نجی تحویل میں نہیں جائیں گے بلکہ ہزاروں ملازمین بھی بے روزگار ہوجائیں گے۔

قومی فضائی ادارے پی آئی اے کو نیلام کردیا جائے گا، حکومت نےاصولی فیصلہ کرلیا ہے، وزیرنجکاری محمدزبیرکا کہنا ہےقومی مفادمیں سخت معاشی فیصلےکرنےسےگریز نہیں کیا جائے گا۔

غیر ملکی ادارےسےانٹروی میں ان کا کہنا رتھا، پی آئی کی نجکاری کاعمل بائیس جولائی سے شروع ہوگا، جب نجکاری کے لئے مالیاتی مشیران کی تقرری ہوگی، آئندہ سال جون تک نجکاری کامکمل کرلیاجائے گا۔

وزیرنجکاری کا کہناہےادارےمیں پچاس فیصد ملازمین اضافی ہیں،جن کی نجکاری سے پہلے چھانٹی ہوگی،محمدزبیرکہتےہیں اس وقت پی آئی اے میں سولہ ہزار چھ سو ملازمین ہیں،یعنی ایک طیارے کےلئےچھ سو ملازمین، حالانکہ دنیا بھر میں ایک طیارے پردوسوتک ملازمین ہوتے ہیں۔

محمد زبیر کا کہنا تھا کہ نجکاری سے پہلے پی آی اے کی ری استرکچرنگ کی جائے گی، پی آئی اے کی نجکاری سے ہزاروں مزدوروں کوبےروزگارہونےکاخدشہ ہے،ملازمتوں سےعلیحدہ کئےجانےوالوں کیلئےبھی پلاننگ کی گئی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top