The news is by your side.

Advertisement

پاکستان میں داعش کا کوئی وجود نہیں، چوہدری ںثار

ٹیکسلا: وفاقی وزیرِداخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ تحریک انصاف تیس نومبر کا جلسہ کرلے پھر مذاکرات کی میز پرآئے انہوں نے پاکستان میں داعش کے وجود کو بھی یکسر رد کردیا۔

وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثارنے ٹیکسلا میں میڈیا سے گفتگو میں تحریک انصاف سے مذاکرات کا عندیہ دے دیا ان کا کہنا تھا تیس نومبر کے جلسے کے بعد پی ٹی آئی سے مذاکرات ہوسکتے ہیں۔

چوہدری نثارکا کہنا تھا اسلام آباد میں جلسہ قانون اورضابطے کے مطابق ہوگا۔

ایک سوال کے جواب میں چوہدری نثار نے پاکستان میں داعش کے وجود ایک بار پھر سختی سے رد کردیا۔

چوہدری نثار کا تحریک انصاف کے جلسے کے حوالے سے مزید کہنا تھا کہ ریاست کو کمزور نہ سمجھا جائے ،ریاست اتنی کمزور نہیں کہ ہرکوئی یلغار کردے ،ان کا کہنا تھا وفاق چاہتا تو اکتیس اگست کو دونوں کنٹینرزکو قبضے میں لیا جاسکتا تھا۔

دوسری جانب وزیرِداخلہ کی جانب سے ریسکیو ڈبل ون ڈبل ٹو کیعمارت کے سنگ بنیاد کی تقریب کے فوری بعد متعلقہ اراضی کے متعدد مبینہ مالکان موقع پر پہنچ گئے ان افراد نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے الزام لگایا کہ جس جگہ پر ریسکیو ڈبل ون ڈبل ٹو کی عمارت تعمیر کی جارہی ہے وہ ان کی ملکیت ہے اور اس کا معاملہ راولپنڈی کی سول عدالت میں زیرسماعت ہے۔

اراضی کے مبینہ مالکان نے اراضی سے متعلق دستاویزات بھی میڈیا کو دکھائی وزیرداخلہ چوہدری نثار علی سے جب اس معاملے پر بات کی گئی تو انہوں نے کہا کہ یہ اراضی کسی کی ملکیت نہیں بلکہ سرکاری ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں