The news is by your side.

Advertisement

چلڈرن ہسپتال منڈی بہاؤالدین: 23روزمیں 17بچے جاں بحق

منڈی بہاؤالدین :گورنمنٹ چلڈرن ہسپتال میں سہولیات کے فقدان کی وجہ سے 23روز میں 17بچے جاں بحق ہوگئے،فنڈزمختص نہ کرنے کی وجہ سے اسپیشلسٹ ڈاکٹرزسمیت 37آسامیوں پربھرتی نہ ہوسکی۔

چلڈرن ہسپتال لیبارٹری اورایکسرے مشین سے محروم  ،ورثاءکاشدیداحتجاج،حکومت پنجاب سے نوٹس لینے کامطالبہ،تفصیلات کے مطابق منڈی بہاؤالدین میں گورنمنٹ چلڈرن ہسپتال میں رواں ماہ 23روزکے دوران 17بچوں جاں بحق ہوگئے۔

لواحقین کا کہنا ہے کہ بچوں کی اتنی بڑی تعدادمیں اموات  ہسپتال میں سہولیات کافقدان ہونے کی وجہ سے ہوئی،ہسپتال کو قائم ہوئے دو سال ہو گئے ہیں،اسپیشلسٹ ڈاکٹرنہ ہونے کی وجہ سے بچوں کی اموات میں اضافہ ہو رہا ہے اورہسپتال میں 37سیٹوں پرآج تک تعیناتیاں نہیں کی جاسکی ہیں۔،

ڈائریکٹرہیلتھ سروسزگجرانوالہ ڈویژن ڈاکٹرپرویزنذیرتارڑنے کہاہے کہ بچوں کی ہلاکت پر حکومت پنجاب نے اسکی رپورٹ طلب کی ہے،اور حکومت پنجاب نے جس جس شہر میں بچوں کی ہلاکتیں ہوئی ہیں وہاں کے ڈی سی او کو ذمہ دار ٹھہرا یاگیا ہے اس دوران جاں بحق ہونے والے بچوں کے ورثا ءنے سہولیات کے فقدان پرشدیداحتجاج کیاہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں