The news is by your side.

Advertisement

چوہدری اسلم پر حملہ کرنے والے ملزم کی شناخت ہوگئی


نادرا نے ایس پی سی آئی ڈی چوہدری اسلم پر حملے میں ملوث مبینہ خودکش حملہ آور کی شناخت کردی ہے، قبائلی علاقے سے تعلق رکھنے والے چھبیس سالہ حملہ آور کا نام نعیم اللہ ولد رفیع اللہ بتایا جاتا ہے، جو بنارس کالونی کراچی کا رہائشی تھا۔جس کی تصویر اے آر وائی نیوز کو موصول ہوگئی ہے۔


 ایس پی سی آئی ڈی چوہدری اسلم پر حملے کو خود کش قرار دیدیا گیاہے اور تفتیشی افسر نیاز احمد کھوسو کے مطابق جائے وقوعہ سے خودکش حملہ آور کا ہاتھ شناخت کیلئے نادرا بھجوایا گیا، نشانات کی مدد سے حملہ آور کے کوائف سامنے آگئے۔

 کوائف کےمطابق مبینہ حملہ آورکا نام نعیم اللہ ہے، نیاز کھوسو نے دوران تفتیش کسی گرفتاری کی تردید کیہے لیکن ذرائع کا کہنا ہے کہ قصبہ کالونی میں نعیم اللہ کے گھر سےغلام اللہ اور قاری صدیق کو گرفتار کیا گیا، یہ کارروائی دھماکے کے بعد گرفتار زخمی ملزم کی نشاندہی پر کی گئی۔

سی آئی ڈی پولیس نے کراچی کی ایک نجی اسپتال سے بھی ایک مبینہ حملہ آور کو گرفتار کیا تھا تفتیشی ذرائع کے مطابق چوہدری اسلم پر حملے کے بعدمسلح حملہ آوروں اور سی آئی ڈی اسکواڈ میں فائرنگ کا تبادلہ بھی ہوا تھا۔

 چوہدری اسلم کیس کی تفتیش کرنےوالی تحقیقاتی ٹیموں کےموقف میں تضاد برقرار ہے بم ڈسپوزل اسکواڈ کے مطابق نصب شدہ بم یونی ڈائریکشن تھا جبکہ پولیس اسے سوزوکی پک اپ میں رکھے دھماکا خیز موادکا نتیجہ بتا رہی ہے۔

 ذرائع کے مطابق وزیر داخلہ چوہدری نثار بھی تصدیق کرچکے ہیں کہ چوہدری اسلم کے قتل میں ملوث شخص اور اس کے خاندانی پس منظر تک پہنچ چکے ہیں، تمام کوائف سندھ حکومت کو منتقل کئے جا رہے ہیں۔
    
   

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں