The news is by your side.

Advertisement

کراچی بدامنی: سات افراد جاں بحق ، چھ زخمی ، مرزا یوسف بال بال بچے


   
کراچی میں ایک بار پھر قتل و غارت کا سلسلہ تیز ہوگیا، مجلس وحدت المسلمین کے رہنما مولانا یوسف مرزا پر حملہ دو ہلکار جاں بحق، مختلف واقعات میں ابتک سات افرادجاں بحق اور چھ زخمی ہوگئے

پولیس کے مطابق گلستان جوہر کے علاقے بلاک بارہ میں ایم ڈبلو ایم کے رہنما مولانا مرزا یوسف پر مسلح افراد نے فائرنگ کی جس سے ان کے دو محافظ اقبال اور مظہر شدید زخمی ہوگئے، جنہیں قریبی اسپتال منتقل کیا جارہا تھا کہ دو نوں دم توڑ گئے، واقعے میں مولانا مرزا یوسف محفوظ رہے جبکہ مسلح افراد فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔

شارع لیاقت پرپولیس مقابلہ کے دوران ملزمان کی فائرنگ سے اے ایس آئی عبدالجبارجاں بحق ہو گیا ، بنارس کی دیر کالونی میں کار پر نامعلوم افراد نے فائرنگ کر کے ایک شخص کو موت کے گھاٹ اتاردیا، پاپوش میں فائرنگ کے واقعے ایک شخص جان کی بازی ہار گیا۔

 منگھوپیر اور اتحاد ٹاون کے علاقے سے دوافراد کی تشدد زدہ لاشیں ملی۔ سمن آباد کے علاقے میں پولیس موبائل پر فائرنگ سے ہیڈ کانسٹبل رحیم لاشاری زخمی ہوا،لیاری کے علاقے سنگولین میں نامعلوم افراد کے کریکر بم حملے میں دو افراد زخمی ہوگئے،لانڈھی ،ملیر، میٹرول سائٹ ایریا میں فائرنگ سے تین افراد زخمی ہوئے۔


لیاری کےعلاقہ ہنگورآبادمیں بلدیاتی الیکشن کی مہم کیلئے جانے والے صوبائی وزیرجاوید ناگوری کی گاڑی پر نامعلوم افراد  نے فائرنگ 

کردی،جاوید ناگوری نے اے آروائی  کو بتایا کہ  فائرنگ کے نشانات ان کی سرکاری اورپولیس موبائل پر دیکھے جاسکتے ہیں، دوسری 

جانب جمعہ بلوچ روڈ کے مکینوں کا دعوی ہے کہ جاوید ناگوری کے محافظوں نے ان پر فائرنگ کی جس سے دو افراد زخمی ہوئے ، 

واقعے کے خلاف مکینوں نے احتجاج بھی کیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں