The news is by your side.

Advertisement

کراچی میں پانی کا شدید بحران، شہری بوند بوند کو ترس گئے

کراچی : شہر قائد میں پانی کابحران سنگین ہوگیا۔ٹینکرزمافیاکی من مانیاں بھی عروج پرہیں۔ شہریوں کاکہنا ہے کہ شہرکا کوئی پرسانِ حال نہیں، گیس بجلی اور سی این جی کی کامیاب بندش کے بعد کراچی والوں کوپانی کی شدید قلت کا سامنا ہے۔

روشنیوں کےشہرکواندھیروں میں بسانےکےبعدحکومتی عدم توجہی کےسبب شہرکوپانی کی خطرناک حد تک کمی  سامنے آئی ہے، دوہرےعذاب سےشہری پریشانی کا شکار ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق شہرِقائد میں گزشتہ کئی ماہ سےجاری پانی کابحران شدت اختیارکرگیا ہے۔بوندبوند کو ترستا ملک کا معاشی حب  کراچی پیاسا رہ کرترقی کی گاڑی کھینچنےپرمجبورہے۔

شہر کےسترفیصدعلاقےپانی کےمسائل سے دوچار ہیں۔ ملیر،کورنگی،اورنگی ٹاؤن،سائٹ میٹروول،نارتھ کراچی،لانڈھی،شیریں جناح کالونی،بلدیہ ٹاؤن اوربہت سےدیگرعلاقوں میں شہریوں کو پینےکاپانی بھی میسر نہیں۔

ڈیفنس، کلفٹن جیسےپوش علاقوں کےمکینوں کوبھی اسی صورتحال کاسامناہے۔ دھابیجی پمپنگ اسٹیشن پرآئےروزبجلی کی لوڈشیڈنگ بھی ایک بہت بڑامسئلہ ہے۔

دوکروڑنفوس پرآبادشہرمیں پانی کےبحران کی بڑی وجہ بدانتظامی اورسیاسی جماعتوں کے درمیان اختلافات ہیں۔ سیاسی کشمکش اور انتظامیہ کی لاپرواہی نے ٹینکرمافیاکی چاندی کردی ہے۔

شہری مہنگے داموں پانی کاٹینکرخریدنے پر مجبورہیں۔ سندھ کےایوان میں بھی مسئلے کی بازگشت سُنائی دی۔ لیکن سنی ان سنی ہوگئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں