site
stats
اہم ترین

کراچی میں فائرنگ، علامہ علی اکبرکمیلی جاں بحق

کراچی : عزیز آباد سے متصل بنگوریا گوٹھ میں نامعلوم افراد نے ایک کار پرفائرنگ کردی جس کے نتیجے میں علامہ عباس کمیلی کے صاحبزادے علامہ علی اکبر جاں بحق جبکہ 3افراد زخمی ہوگئے۔

کراچی میں عزیز آباد کے قریب فائرنگ کے واقعے میں علامہ عباس کمیلی کے صاحبزادے علامہ علی اکبر کمیلی جاں بحق ہو گئے ہیں، ملزمان موٹر سائیکل پر سوار تھے، جو اطمینان سے گولیوں کی بوچھاڑ کرکے فرار ہو گئے، جعفریہ الائنس کے مطابق علی اکبر کمیلی کو تین گولیاں لگیں، اور ان کا ساتھی بھی زخمی ہوا، دونوں کو اسپتال لےجایا گیا، جہاں علی اکبر کمیلی جانبر نہ ہو سکے، کالعدم تنظیم جنداللہ نے علامہ عباس کمیلی کے صاحبزادے کی ٹارگٹ کلنگ کی ذمہ داری قبول کر لی۔

مجلس وحدت مسلمین نے واقعے کی پرزور مذمت کرتے ہوئے واقعے میں ملوث دہشت گردوں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے،وزیراعظم نواز شریف نے علامہ علی اکبرکمیلی پرفائرنگ کےواقعےکی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے عوام اتحادسےدہشت گردی کوناکام بنائیں۔

ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے علی اکبرکمیلی کی شہادت پر علامہ عباس کمیلی سے دلی تعزیت کی۔ الطاف حسین کہتے ہیں کالعدم فرقہ پرست تنظیموں کے دہشت گردکراچی میں علمائے کرام، ڈاکٹروں، انجینئروں، پروفیسروں اور تاجروں کوچن چن کر نشانہ بنارہے ہیں۔ مگر فرقہ پرست کالعدم تنظیموں کے دہشت گردوں کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کی جارہی،الطاف حسین نے سوال کیا ہے کہ کیایہ فرقہ پرست کالعدم تنظیمیں حکومت اورریاست سے زیادہ طاقتورہیں کہ ان پر ہاتھ نہیں ڈالاجارہاہے۔

 

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top