The news is by your side.

Advertisement

کشمیری آج بھارت کے یومِ جمہوریہ پر یومِ سیاہ منائیں گے

کشمیر: بھارت میں یومِ جمہوریہ کے موقع پر مقبوضہ جموں و کشمیر میں یوم سیاہ منایا جائے گا۔

بھارتی فوج کا مقبوضہ جموں وکشمیر میں بدترین ظلم وستم جاری ہے، ایسی صورت میں جمہوریت کے دعوے دار بھارت کا یومِ جمہوریہ منانا کسی مذاق سے کم نہیں ہے، کشمیری آج بھارت کے یومِ جمہوریہ کے موقع پر یومِ سیاہ  منائیں گے۔

اس موقع پر عام ہڑتال ہو گی اور احتجاجی ریلیاں نکالی جائینگی، ہڑتال اور یومِ سیاہ کی اپیل حریت کانفرنس اور متحدہ جہاد کونسل نے دے رکھی ہے، تمام کاروباری ادارے اور سرکاری دفاتر ، بینک، تعلیمی ادارے بند رہیں گے۔

ریاست جموں و کشمیر کے دونوں اطراف جلسے، جلوس، ریلیاں، احتجاجی مظاہرے اور دھرنے دیئے جائیں گے۔

بھارتی یومِ جمہوریہ پر مقبوضہ وادی میں سخت سکیورٹی انتظامات کئے گئے ہیں، اضافی نفری تعینات کر دی گئی، ناکہ بندی کر دی گئی ہے۔

حریت رہنماء اور دیگر کشمیری سری نگر سمیت سرحدوں کے پار احتجاج کریں گے اور بھارت سے مطالبہ کریں گے کہ وادی سے فوج کو واپس بلا کر کشمیریوں کی نسل کشی بند کرے ۔

یہ پہلا موقع ہوگا کہ 26 جنوری کو بھارت کے ریپبلک ڈے کی تقریب میں کوئی امریکی صدر بطور مہمان خصوصی شریک ہوگا۔

گزشتہ روز مقبوضہ کشمیر میں بھارتی بارڈر سیکیورٹی فورس کے اہلکاروں کے ہاتھوں شہریوں کے قتل عام کی برسی کے موقع پر اتوار کو ہندواڑہ قصبے میں مکمل ہڑتال کی گئی۔

یاد رہے کہ بھارتی بارڈر سیکیورٹی فورس کے اہلکاروں نے 25جنوری 1990کو قصبے میں پُرامن مظاہرین پر اندھا دھند فائرنگ کر کے 17بے گناہ شہریوں کو شہید جبکہ درجنوں کو زخمی کر دیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں