site
stats
پاکستان

کوئٹہ: صحافیوں کے قتل کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

کوئٹہ:صحافیوں کے قتل کےخلاف احتجاجی مظاہرہ اوراحتجاجی ریلی پریس کلب سے صدرعبدالرزاق بنگلزئی کی قیادت میں نکالی گئی مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈاوربینراٹھارکھے جن پر صحافیوں کے قتل عام کے خلاف نعرے درج تھے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے عبدالرزاق بنگلزئی ,منٹھار منگی،اصغرعلی حیدری،فیض محمد لہڑی سمیت دیگر صحافیوں نے کہاکہ کوئٹہ میں صحافیوں کے قتل کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔

قلم کو کبھی بندوق کے ذریعے خاموش نہیں کرایا جاسکتا،حق وسچ کے نکلے ہوئے اس قافلے کو ان اوچھے ہتھکنڈوں سے کبھی نہیں روکا جاسکتا،صحافیوں کا قتل ایک بزدلانہ فعل ہے انہوں نے کہاکہ قاتل جتنی بھی کوششیں کریں ہم اپنے فرائض سے کبھی بھی دستبرارنہیں ہونگے ۔

انہوں نے کہاکہ بلوچستان کے مختلف اضلاع میں صحافیوں کو ٹارگٹ کلنگ کرکے شہید کردیا گیا لیکن کئی ماہ گزرنے کے باوجود قاتلوں کو گرفتار نہیں کیا گیا اور نہ ہی حکومت کی سطح پر صحافیوں کے اہل خانہ کی مالی مدد کی گئی ہے ۔

جبکہ دوسری جانب بلوچستان بھر میں صحافیوں کو قتل کرنے اور سنگین دھمکیوں کا سامنا ہے لیکن بلوچستان حکومت کی جانب سے صحافیوں کو تحفظ فراہم کرنے کیلئے کوئی اقدام نہیں کیے جارہے ہیں اور نہ ہی دھمکیاں دینے والوں کے خلاف کارروائی کی جارہی ہے۔

مقررین نے مطالبہ کیا کہ بلوچستان کے صحافیوں کو تحفظ فراہم کیا جائے اور انہیں اپنے پیشہ وارانہ فرائض میں رکاوٹ ڈالنے والوں کے خلاف کارروائی کی جائے

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top