کیلے کھانے سے ہائی بلڈ پریشر کو کم کرنے میں مدد ملتی ہے -
The news is by your side.

Advertisement

کیلے کھانے سے ہائی بلڈ پریشر کو کم کرنے میں مدد ملتی ہے

کیلے کا استعمال ہائی بلڈ پریشر میں مبتلا افراد کے لیے نہایت مفید ہے ۔

پوٹاشیم سے بھرپور پھل کیلے کے استعمال سے ہائی بلڈ پریشر کو کنٹرول کرنے میں مدد ملتی ہے، طبی ماہرین کے مطابق کیلے میں پائے جانے والے اہم اجزاءانسانی جسم میں موجود نمک پر اثر انداز ہوتے ہیں اور گردوں کی کارکردگی کو معمول کے مطابق کام کرنے میں مدد دیتے ہیں۔

تحقیق کے مطابق روزانہ دو کیلوں کا استعمال دس فیصد تک بلڈ پریشرکو کم کردیتا ہے۔

امریکی طبی ماہرین کے مطابق کیلے کھانے سے دل کی بھی مختلف بیماریوں سے بچا جاسکتا ہے۔طبی ماہرین نے ایک تحقیق کے بعد بتایا ہے کہ کیلے میں موجود فائبر، پوٹاشیم اور وٹامن سی دل کو صحت مند رکھتے ہیں، ان سے شریانوں کی بیماریاں لاحق ہونے کے خطرات کم ہوتے ہیں، کیلے کا استعمال کینسر، سانس اور ہائی بلڈ پریشر کے امراض میں بھی سودمند اور مفید ثابت ہوتا ہے۔

ایک تحقیق سے یہ ثابت ہوا ہے کہ دو کیلے ڈیڑھ گھنٹے کی سخت مشقت کے بعد توانائی کی بحالی کے لئے کافی ہیں، کیلا ہمارے جسم کو توانائی فراہم کرنے کے علاوہ اسے فٹ رکھنے میں مددگار ہوتا ہے، اسے اپنی روزمرہ غذاؤں میں شامل کرنا بہت سی بیماریوں سے بچاؤ کا باعث بھی بنتا ہے۔

کیلا جسم میں خون کی کمی نہیں ہونے دیتا، کیوں کہ یہ آئرن سے بھرپور ہوتا ہے، بلند فشار خون کو معتدل رکھنے میں کیلا بہت مفید ہے، کیلے میں پائی جانے والے پوٹاشیم کی بھاری مقدار اور اس کے مقابل نمکیات کی کم مقدار خون کے دورانیہ کو بہتر بناتی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں