The news is by your side.

Advertisement

کینجھرجھیل قتل کیس:پانچ افراد کی ہلاکتوں کامعمہ حل نہ ہوسکا

کینجھرجھیل میں نوری جام تماچی کے مزار پر پانچ ہلاکتوں کامعمہ حل نہ ہوسکا، جائےوقوع سے پستول برآمدہواجبکہ دو مشتبہ افراد حراست میں لے لئے گئے۔چارلاشیں پوسٹ مارٹم کے بعد کراچی منتقل کردی گئیں۔

کینجھرجھیل میں نوری جام تماچی کے مزار پر پراسرار ہلاکتوں کے واقعے کی تحقیقات جاری ہے، ابتدائی رپورٹ کے مطابق پانچوں افراد کوسرپر گولیاں مارکر ہلاک کیا گیا۔

۔ڈی آئی جی حیدرآباد نعیم بروکا کا کہنا تھا کہ مقتولین کشتی بک کرا کے مزار پر پہنچے تھے۔ ڈی آئی جی حیدرآباد مقتولین میں سےچاروں افرادکی لاشوں کوسول اسپتال مکلی سے پوسٹ مارٹم کے بعدکراچی منتقل کیا گیاہے۔ جاں بحق محمد علی ریاض، عدنان یوسف اور سہیل کی لاشیں ایدھی سردخانےجبکہ ریٹائرڈ میجر جہانگیر اخترکی میت کو پی این ایس شفاء منتقل کیا گیا۔

میتوں کی آمد پررقت آمیز مناظر دیکھنے میں آئے،غم سےنڈھال لواحقین اورعزیز و اقارب ایک دوسرے کو دلاسہ دیتے رہے۔ورثاء کے مطابق علی ریاض کی چند روز پہلے ہی شادی ہوئی تھی، تمام افرادایک ساتھ ہی کینجھر جھیل گئے تھے۔

پانچویں مقتول ریٹائرڈ کیپٹن بلال کی میت بھی جلد کراچی منتقل کی جائے گی،پھر ان کی اور ریٹائرڈ میجرجہانگیرکی میت کوآبائی علاقے روانہ کیا جائےگا۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں