The news is by your side.

Advertisement

گجرات: دوطالبان دہشت گرد پولیس مقابلے میں ہلاک

گجرات : تحریک طالبان کے دودہشت گردپولیس مقابلےمیں مارے گئے جبکہ ایک پولیس اہلکار زخمی ہوگیا۔ تفصیلات کے مطابق گجرات میں پولیس نے مقابلے کے دوران دو طالبان دہشت گردوں کو ہلاک کردیا۔

ڈی پی او رائے اعجاز احمد نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ دونوں دہشت گرد پہلے الفرقان نامی کالعدم تنظیم سے تعلق رکھتے تھے جو بعد میں تحریک طالبان پاکستان کے لئے کام کرنا شروع ہوگئے ۔

ان دہشت گردوں نے 13مارچ 2012ءکو کھٹالہ چناب پولیس ناکہ پر حملہ کر کے ہیڈکانسٹیبل ارشد محمود، کانسٹیبل قمر بٹ، شفقت اعظم اورسیرت عباس کو شہید کیا تھا ۔

جبکہ 14اگست 2013ءکو محلہ چاہ بڈھے والا میں ایک کانسٹیبل سرفراز کو فائرنگ کر کے شہید کیا تھا دہشت گردوں نے دو شہریوں کو تاوان کے غرض سے اغواءکرنے کے بعد نالہ بھمبر میں لے جا کر ذبح کر دیا تھا۔

ڈی پی اوگجرات کا کہنا تھا کہ دہشت گردوں میں افضل عرف فوجی کا تعلق گجرات سے جبکہ احمد عرف بابا کا تعلق ٹوبہ ٹیک سنگھ سے تھا۔

ان دونوں دہشت گردوں اورتحریک طالبان پاکستان کو فنڈزفراہم کرنے والے تین افراد پولیس کی حراست میں ہیں جن میں ڈاکٹر اسلم ڈسٹرکٹ جیل میں بند ہےمارے جانے والے دہشت گردوں نے دوران تفتیش انکشافات کرتے ہوئے بتایا تھا کے وہ پولیس لائن فیصل آباد اورگجرات کی اہم سیاسی شخصیات پر حملہ کی منصوبہ بندی کر رہے تھے۔

ڈی پی او کا کہنا تھا کہ مارے جانے والے دہشت گردوں کے ساتھی ہر اس پولیس اہلکار کو دھمکیاں دیتے تھے جو ان کی تفتیش کرتا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں