The news is by your side.

Advertisement

گلگت: 2مفرور قیدیوں کی تلاش کیلئے پولیس کا سرچ آپریشن

گلگت : ڈسٹرکٹ جیل گلگت سے فرار ہونے والے دونوں قیدیوں کی تلاش کیلئے پولیس کا سرچ آپریشن جاری ہے۔

گزشتہ روز ڈسٹرکٹ جیل گلگت سے چار انتہائی خطرنا ک قیدی فرار ہوگئے، پولیس نے تعاقب کیا جس پر مقابلہ ہوا، مقابلے میں ایک قیدی ہلاک ایک زخمی حالت میں گرفتار جبکہ دو قیدی فرار ہوگئے۔

دونوں قیدیوں کی تلاش کیلئے پولیس کا سرچ آپریشن جاری ہے اور تمام پہاڑی دروں پر پولیس اور گلگت بلتستان اسکاؤٹس کے مسلح اہلکار تعینات کردیئے گئے ہیں جبکہ شہر کے داخلی اور خارجی راستوں کو بندکردی گیا ہے۔

چیف سیکریٹری گلگت بلتستان سکندر سلطان راجا نے ڈپٹی جیل سپرنٹنڈنٹ اور تمام عملے کو معطل کرتے ہوئے ہوم سیکریٹری کی سربراہی میں تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دے دی ہے۔

یاد رہے کہ گلگت جیل سے رات گئے فرارہونے والے قیدیوں کے واقعے کے بعد جیل میں قیدیوں نے ہنگامہ آرائی کی، جس پر پولیس نے شیلنگ اور ہوائی فائرنگ کی، چیف سیکریٹری گلگت نے آئی جی جیل کو معطل کردیا ہے اور قیدیوں کی تلاش کی لئےفوج سے مدد طلب کرلی۔

ڈسٹرکٹ جیل گلگت سے فرار ہونے والے قیدیوں سے متعلق تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے، کمیٹی میں چیف سیکرٹری گلگت بلتستان،سیکرٹری داخلہ، ڈی آئی جی ہیڈکوارٹرزاورحساس اداروں کے نمائندے شامل ہیں، چیف سیکرٹری گلگت بلتستان نے سپرنٹنڈنٹ جیل سمیت تمام عملے کومعطل کردیا ہے۔

سیکریٹری داخلہ گلگت بلتستان کی جانب سے فرار قیدیوں کی گرفتاری میں مدد کرنے والوں کیلئے بیس لاکھ روپے کی انعامی رقم کا اعلان کیا گیا ہے۔ رات گئے ڈسٹرکٹ جیل گلگت سے چار قیدی فرار ہوگئے تھے۔

پولیس کا دعویٰ ہےکہ چاروں ملزمان سانحہ نانگا پربت میں ملوث ہیں، بائیس جون دوہزارتیرہ کو بیس کیمپ پردس غیرملکی کوہ پیماؤں سمیت گیارہ افراد کو قتل کردیا گیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں