site
stats
پاکستان

گوجرانوالہ ٹرین حادثہ، مزید 3شہداء کی لاشیں نکال لی گئیں، شہداءکی تعداد17ہوگئی

گوجرانوالہ: گوجرانوالہ میں پل ٹوٹنےسے فوج کا خصوصی دستہ لےجانے والی ٹرین نہر میں گرنے سے سترہ افراد شہید ہوگئے، ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق مزید کی تلاش جاری ہے۔

گوجرانوالہ میں پل ٹوٹنےسے فوج کا خصوصی دستہ لے جانے والی ٹرین نہر میں جاگری، جس کے نتیجے میں اب تک سترہ افراد کی لاشیں نکال لی گئیں ہیں جبکہ باقی افراد کی تلاش جاری ہے۔

سو سال پرانے ٹریک پر سے کچھ دیر پہلے ہی ایک اور ٹرین صحیح سلامت گزری تھی، حادثے کا شکار ہونے والی ریل گاڑی خصوصی تھی، جو پاک فوج کے دو سو جوانوں کو پنوعاقل سے کھاریاں لے جارہی تھی۔

عینی شاہدین کے مطابق گوجرانوالہ کے قریب ہیڈ چھنانواں کے پل سے گزررہی تھی کہ اچانک پل گرگیا ، جام کے چٹھہ نہر پر بنا پُل ٹوٹا تو تین بوگیاں نہرمیں گرگئیں۔

حادثے کے فوری بعد امدادی کارروائیاں شروع کر دی گئیں۔ پاک فوج کے غوطہ خور اور ہیلی کاپٹر سمیت وقوعہ پر پہنچ گئے، کورکمانڈر گوجرانوالہ لیفٹیننٹ جنرل غیور محمود نے امدادی کاموں کی نگرانی کی۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق حادثے میں یونٹ کمانڈر لیفٹیننٹ کرنل عامر جدون، ان کی اہلیہ اور دو بچے بھی ٹرین حادثے میں شہید ہوئے، کیپٹن عادل، لیفٹیننٹ کاشف، کانسٹیبل اسلام اور لانس نائیک ظفر شہداء میں شامل ہیں ۔ حادثے کے زخمیوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا جہاں ان کی حالت خطرے سے باہر بتائی جاتی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top