گورنرکا عہدہ زیادہ عرصہ خالی نہیں رکھا جا سکتا،لاہور ہائیکورٹ -
The news is by your side.

Advertisement

گورنرکا عہدہ زیادہ عرصہ خالی نہیں رکھا جا سکتا،لاہور ہائیکورٹ

لاہور: پنجاب کے گورنر کی تعیناتی کے لئے ہونے والی پیش رفت کی رپورٹ لاہور ہائی کورٹ نے طلب کر لی ۔ عدالت نے قرار دیا کہ گورنر آئینی عہد ہ ہے، اس کو خالی نہیں رکھا جا سکتا۔

جسٹس سید منصور علی شاہ نے کیس کی سماعت کی ۔ وفاقی حکومت کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ صوبے کا منصب سیاسی نوعیت کا ہے اس پر نئے تقرر کے لئے مشاورت کا عمل جاری ہے ۔

سرکاری وکیل کا کہنا تھا کہ ہندوستان میں گورنر کے عہدے پر تقرر چھ ماہ تک کیا جاسکتا ہے۔ درخواست گزار نے دلائل دیئے کہ آئین پاکستان میں اس قسم کی کوئی گنجائش موجود نہیں۔

عدالت نے ریمارکس دیئے کہ گورنر کا عہدہ آئینی ہے، اسے خالی نہیں رکھا جا سکتا ۔ عدالت نے وفاقی حکومت کو ہدایت کی کہ پنجاب کے نئے گورنر کی تعیناتی کے حوالے سے ہونے والی پیش رفت کی تفصیلی رپورٹ پیش کی جائے ۔

کیس کی مزید سماعت ستائیس فروری تک ملتو ی کردی گئی ہے ۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں