The news is by your side.

Advertisement

نائجر: مسجد میں تین خودکش حملے، 10 افراد جاں بحق، متعدد زخمی

نیامی: افریقی ملک نائجر کی ایک مسجد میں یکے بعد دیگرے تین خودکش دھماکے ہوئے جس کے نتیجے میں دس افراد جاں بحق اور متعدد زخمی ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق یہ واقعہ نائجر کے شہر ’دیفا‘ میں پیش آیا جہاں مقامی مسجد میں نمازیوں کی بڑی تعداد افطار کرنے میں مصروف تھی کہ اچانک تین خودکش دھماکے ہوئے جس کے نتیجے میں 10 نمازی شہید جبکہ متعدد زخمی ہوگئے۔

عالمی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ مسجد میں نمازی مغرب کی اذان سن کر معمول کے مطابق افطار کرنے میں مصروف تھے کہ اسی دوران یکے بعد دیگرے زور دار دھماکے ہوئے اور بھگدڑ مچ گئی جبکہ دھماکے میں دس افراد اپنی زندگی کی بازی ہار گئے۔

ترجمان نائجر آرمی کا کہنا ہے کہ شہر دیفا میں سیکیورٹی سخت کردی گئی ہے اور افریقہ کے دیگر ممالک سے جڑے نائجری بارڈرز پر سخت کنڑول ہے تاکہ شدت پسند عناصر ملک میں گھس نہ سکے۔


برلن میں انتہاپسندوں نےمسجد پرحملہ کرکےآگ لگادی


ترجمان کا کہنا تھا کہ یہ حملے نائجیریا میں برسرپیکار عسکریت پسند تنظیم بوکوحرام کی جانب سے بھی ہوسکتے ہیں کیوں کہ یہ تنظیم نائجر میں بھی فعال ہوچکی ہے جس کے خلاف کارروائی کررہے ہیں۔

خیال رہے کہ یہ حملہ ایک ایسے وقت میں ہوا ہے کہ جب نائجر کے وزیر اعظم ’محمدو اسوفو‘ سرکاری دورے پر فرانس کے دار الحکومت پیرس میں موجود ہیں جس کے بعد وہ دیگر ممالک کا بھی دورہ کریں گے۔


کابل : مسجد میں خود کش حملہ: 8افراد ہلاک 22 زخمی


واضح رہے کہ نائجیریا اور نائجر سمیت دیگر افریقی ممالک میں شدت پسند تنظیم بوکوحرام کے حملوں میں اب تک پندہ ہزار افراد ہلاک اور لاکھوں بے گھر ہو چکے ہیں، جبکہ ہلاک ہونے والوں میں فوجی اہلکار بھی شامل ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔ 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں