The news is by your side.

شہباز گل کی عدالت میں پیشی، جسمانی ریمانڈ منظور

 اسلام آباد کی مقامی عدالت نے بغاوت کے مقدمے میں گرفتار پی ٹی آئی رہنما شہباز گل کا جسمانی ریمانڈ منظور کرلیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد میں شہبازگل کیخلاف بغاوت پر اکسانےسے متعلق کیس کی سماعت ڈیوٹی مجسٹریٹ عمر شبیر نے کی۔

گرفتار پی ٹی آئی رہنما شہباز گل کو سخت سیکیورٹی میں عدالت میں پیش کیا گیا۔

سماعت کے آغاز پر اسلام آباد پولیس کی جانب سے شہباز گِل کے چودہ روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی گئی جبکہ شہباز گل کے وکیل فیصل چوہدری نے جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی مخالفت کی۔

پولیس کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ شہباز گل سے انکا موبائل فون برآمد اور جس پیپر سے دیکھ کر وہ بول رہے تھے، وہ برآمد کرنا ہے اور اس بارے میں تفتیش کرنی ہے کہ پروگرام کس کے کہنے پر ہوا؟

شہباز گل کے وکیل کی جانب سے موقف اپنایا گیا کہ پروگرام کسی کے کہنے پر نہیں کیا گیا۔

عدالت نے شہباز گل کے جسمانی ریمانڈ سے متعلق پولیس کی استدعا منظور کرتے ہوئے انہیں دو روز کے لئے پولیس کے حوالے کردیا۔

شہباز گل پر تھانہ کوہسار میں اداروں کے خلاف مبینہ غداری سمیت سنگین نوعیت کے دس مقدمات درج ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: شہباز گل کی گرفتاری، پی ٹی آئی کا ایف آئی اے سے رجوع کرنیکا فیصلہ

عدالت کی جانب سے جسمانی ریمانڈ منظور ہونے کے بعد پولیس پی ٹی آئی رہنما کو عدالت سے لیکر روانہ ہوگئی۔

شہباز گل کی گرفتاری پر چیئرمین عمران خان نے سخت ردعمل کا اظہار کرتے
ہوئے اسے بدترین آمریت قرار دیا تھا اور رہنماؤں کو الرٹ جاری کردیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں