The news is by your side.

Advertisement

2018 میں 22ہزار افراد ایڈز کا شکار ہوئے ، رپورٹ میں انکشاف

پاکستان میں ایڈز میں مبتلا مریضوں کی کل تعداد 1لاکھ 60ہزار ہوگئی

لاہور : پاکستان میں ایڈز میں مبتلا مریضوں کی کل تعداد 1لاکھ 60ہزار ہو گئی جبکہ 2018 میں 22ہزار افراد ایڈز کا شکار ہوئے اور 6 ہزار 400 افراد ایڈز کی وجہ سے ہلاک ہوئے۔

تفصیلات کے مطابق اقوام متحدہ کے ایڈز کنٹرول پروگرام کی طرف سے پاکستان میں ایڈز کے مرض سے متعلق رپورٹ سامنے آئی ہے جس میں انکشاف کیا گیاہے کہ سال 2018میں 22 ہزار افراد اس مہلک بیماری کا شکار ہوئے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ایڈز کے مرض میں مبتلا 14سال تک کی عمر کے بچوں کی تعداد 1400 ہوچکی ہے اور5 ہزار 900 خواتین اس مہلک بیماری کا شکار ہوئیں ۔

اقوام متحدہ کی رپورٹ میں بتایا گیاہے کہ مردوں میں بھی ایڈز کاتیزی سے پھیلاﺅدیکھنے میں آیاہے اور سال 2018میں 15 ہزار مرد ایڈز میں مبتلا ہوئے ۔

رپورٹ کے مطابق پاکستان میں گزشتہ سال 6ہزار400 افراد ایڈز کی وجہ سے ہلاک ہوئے جن میں 800بچے ، 1800خواتین اور 3800مرد شامل ہیں ۔

رپورٹ کے مطابق پاکستان میں ایڈز میں مبتلا مریضوں کی کل تعداد 1لاکھ 60ہزار ہو گئی ہے، ایڈز کے مریضوں میں سے انجکشن کے ذریعے نشہ کرنے والے 21فیصد افراد اس بیماری کا شکار ہیں۔

واضح رہے کہ وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے قومی صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے رواں سال مئی میں ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کو بتایا تھا کہ پاکستان میں ایک لاکھ 63 ہزار افراد کے ایڈز میں مبتلا ہونے کا خدشہ ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں