The news is by your side.

Advertisement

ایف بی آر ریونیو میں17 فیصد اضافہ گڈگورننس کی گواہی دیتا ہے،علی زیدی

اسلام آباد: وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی نے کہا ہے کہ ایف بی آر ریونیو میں17 فیصد اضافہ گڈگورننس کی گواہی دیتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں وفاقی وزیر علی زیدی اور مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ کے درمیان ملاقات ہوئی جس میں بجٹ 2020 پر تفصیلی گفتگو ہوئی۔

اس موقع پر علی زیدی کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت ملک کو بحران سے نکالنے کے لیے اقدامات کر رہی ہے،حالیہ ملکی صورت حال کے پیش نظر نئے ٹیکس نہ لگانا قابل ستائش ہے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ کرونا سے معیشت کو نقصان پہنچا ہے،مہلک وبا سے نمٹنے کے لیے حکومت نے لوگوں کی مالی معاونت کی،بجٹ میں اخراجات کم کر کے عوام کی فلاح کا سوچاگیا ہے۔

علی زیدی کا کہنا تھا کہ ایف بی آر کے ریونیو میں17 فیصداضافہ گڈگورننس کی گواہی دیتا ہے،مشکل حالات میں یہ بجٹ مثالی ریلیف فراہم کرےگا اور کاروباری رینکنگ بہتر ہونے سے بیرونی سرمایہ کاری بڑھےگی۔

یاد رہے کہ دو روز قبل مشیرخزانہ عبدالحفیظ شیخ نے اقتصادی سروے رپورٹ20- 2019 پیش کرتے ہوئے کہا تھا کہ ملکی تاریخ میں پہلی بار آمدنی زیادہ اور اخراجات کم رہے، 20ارب ڈالر کا کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ کم کر کے 3 ارب ڈالر تک لائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں