اٹھارہویں ترمیم میں تبدیلی ضروری ہے، یہ آسمانی صحیفہ نہیں، خرم شیرزمان -
The news is by your side.

Advertisement

اٹھارہویں ترمیم میں تبدیلی ضروری ہے، یہ آسمانی صحیفہ نہیں، خرم شیرزمان

پاکستان تحریک انصاف کے ممبر سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے کہا ہے کہ عوام کی بہتری کیلئے18ویں ترمیم کی شقوں میں تبدیلی ضروری ہے، یہ کوئی آسمانی صحیفہ نہیں کہ تبدیل نہ ہوسکے۔

یہ بات انہوں نے چیئر مین پی پی بلاول بھٹو زرداری کے حالیہ بیان پر اپنا ردعمل دیتے ہوئے کہی، پی ٹی آئی کراچی کے صدر خرم شیر زمان نے کہا کہ پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کے معاملے پر بلاول بھٹو یو ٹرن پر یو ٹرن لے رہے ہیں، وفاق میں پی اے سی مانگنے والے سندھ میں آکر اپنے مؤقف سے پیچھے ہٹ گئے۔

انہوں نے کہا کہ سندھ میں تعلیم، صحت و صفائی کے شعبے اور انفراسٹرکچر تباہ حالی کا شکار ہیں، پی پی رہنما سندھ کے سرکاری اداروں کی حالت زار پر توجہ دیں اور کام کریں۔

ایک سوال کے جواب میں ممبر سندھ اسمبلی کا کہنا تھا کہ18ویں ترمیم کوئی آسمانی صحیفہ نہیں ہے کہ اس میں کوئی تبدیلی نہ کی جاسکے، عوام کی بہتری کیلئے18ویں ترمیم کی شقوں میں تبدیلی ضروری ہے،18ویں ترمیم میں عوام کی بہتری کیلئے تبدیلی کی مخالفت عوام دشمنی ہے۔

مزید پڑھیں : آئین کو تبدیل کرنے کی کوشش کی گئی تو لانگ مارچ بھی کر سکتے ہیں،  بلاول بھٹو

واضح رہے کہ چیئرمین پی پی نے کراچی پریس کلب میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ صحافیوں کے تحفظ اور آزادی اظہار رائے کے لیے قانونی سازی کرنا ہوگی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ اس وقت اٹھارویں آئینی ترمیم اور جمہوریت پر حملے ہو رہے ہیں، آئین کو تبدیل کرنے کی کوشش کی گئی تو لانگ مارچ بھی کر سکتے ہیں، 18 ویں ترمیم ہم نے جدوجہد کے بعد پاس کی، اس پر حملے برداشت نہیں کر سکتے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں