بھارتی فوج کی تتہ پانی سیکٹر پر بلا اشتعال فائرنگ، 2 شہری شہید -
The news is by your side.

Advertisement

بھارتی فوج کی تتہ پانی سیکٹر پر بلا اشتعال فائرنگ، 2 شہری شہید

سیالکوٹ: بھارتی فوج نے لائن آف کنٹرول پر سیز فائر کی ایک بار پھر خلاف ورزی کرتے ہوئے جند روٹ اور تتہ پانی سیکٹرز پر بلا اشتعال فائرنگ کی جس سے 2 شہری شہید اور 3 زخمی ہوگئے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق بھارت فوج نے جند روٹ اور تتہ پانی سیکٹرز پر شہری آبادی کو نشانہ بنایا۔

بھارتی فوج کی بلا اشتعال فائرنگ سے 2 شہری شہید جبکہ 3 زخمی ہوئے۔ شہدا میں 18 سال نوجوان وقار یونس اور 19 سالہ اسد علی شامل ہیں۔

زخمی ہونے والوں میں محمد شہباز، شمائلہ خورشید اور حفضہ شبیر شامل ہیں۔

ڈپٹی ہائی کمشنر کی دفتر خارجہ طلبی

بھارتی فوج کی سیز فائر کی خلاف ورزی اور بلا اشتعال فائرنگ کے کچھ ہی دیر بعد دفتر خارجہ نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو طلب کرلیا۔

ایل او سی پر 2 شہریوں کی شہادت پر پاکستان نے سخت مذمت کی۔ پاکستان کی جانب سے شہری آبادی کو نشانہ بنائے جانے پر ڈپٹی ہائی کمشنر سے شدید احتجاج کیا گیا۔

یاد رہے کہ صرف 2 دن قبل بھی بھارتی فوج کی چیری کوٹ سیکٹر پر بلا اشتعال فائرنگ سے 70 سالہ شہری شہید ہوگئے تھے۔ پاک فوج نے بھرپور جوابی کارروائی کی تو دشمن کی بندوقیں خاموش ہوگئیں۔

ترجمان دفتر خارجہ نفیس زکریا کے مطابق دسمبر 2016 سے لے کر مارچ 2017 تک بھارت نے 1400 بار ایل او سی کی خلاف ورزی کی جن میں اب تک 400 سے زائد افراد شہید ہوچکے ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں