The news is by your side.

Advertisement

پنجاب پولیو پروگرام نے قصور میں پولیو کیس کی خبروں کی تردید کر دی

خیبر پختون خوا میں 2 اور بچے پولیو وائرس کا شکار، ملک میں مجموعی تعداد 64 ہوگئی

لاہور: پنجاب پولیو پروگرام نے قصور میں پولیو کیس سے متعلق چلنے والی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ قصور میں پولیو کا کوئی کیس سامنے نہیں آیا۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب پولیو پروگرام کا کہنا ہے کہ پولیو کیس کی تصدیق صرف قومی ادارہ صحت کرتا ہے، قصور میں کوئی پولیو کیس سامنے نہیں آیا ہے۔

صوبائی انسداد پولیو پروگرام کے مطابق رواں سال پنجاب میں پولیو کے 5 کیس رپورٹ ہوئے ہیں، جن میں 4 کا تعلق لاہور اور ایک کا جہلم سے ہے۔

واضح رہے کہ ملک میں رواں سال 64 پولیو کیس رپورٹ ہوئے ہیں، جن میں 48 کا تعلق خیبر پختون خوا سے ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  کراچی: ویکسین سے انکار پر 2 مزید بچے پولیو وائرس کا شکار

آج خیبر پختون خوا میں 2 اور بچے پولیو وائرس کا شکار ہو گئے ہیں، جس کے بعد مجموعی کیسز کی تعداد چونسٹھ ہوئی، نئے پولیو کیسز سرائے نورنگ ضلع لکی مروت اور ضلع تورغر سے رپورٹ ہوئے ہیں۔

ایمرجنسی آپریشن سینٹر کے مطابق لکی مروت میں ڈھائی سالہ بچی پولیو سے متاثر ہوئی ہے جس کو پولیو کے قطرے نہیں پلائے گئے تھے جب کہ تورغر میں 2 سالہ بچے کو پولیو نے نشانہ بنایا۔

ای او سی کے مطابق پولیو کیسز کی بڑی وجہ والدین کا بچوں کو حفاظتی قطرے پلانے سے انکار ہے۔

کوآرڈینیٹر عبد الباسط کا کہنا تھا پولیو ویکسین ہر لحاظ سے محفوظ ہے، والدین گم راہ کن پروپیگنڈے پر کان نہ دھریں، چیلنجز اور مشکلات کے باوجود حکومت پولیو کے مکمل خاتمہ کے لیے پرعزم ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں