The news is by your side.

Advertisement

سفید فام نوجوان کی رہائی، امریکا بھر میں مظاہرے پھوٹ پڑے

واشنگٹن: دہرے قتل میں ملوث سفید فام نوجوان کی رہائی کیخلاف امریکا بھر میں احتجاجی مظاہرے شروع ہوگئے ہیں۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق کنوشا کی عدالتی فیصلے کے خلاف نیویارک، شکاگو،کنوشا، آکلینڈ سمیت کئی شہروں میں احتجاجی مظاہرے کئے جارہے ہیں۔

یاد رہے کہ سفید فام امریکی شہری کائل رِٹنہاؤس نے 25 اگست 2020 کو کنوشا میں نسلی امتیاز کے خلاف مظاہرہ کرنے والوں پر فائرنگ کر کے 2 افراد کو ہلاک اور ایک کو زخمی کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: امریکی عدالت نے قاتل کے آنسوؤں سے متاثر ہوکر اسے بری کر دیا

اس کیس میں امریکی عدالت کی 12 رکنی جیوری نے تین دن غور کے بعد فیصلہ سنایا، جسے سیاہ فام امریکیوں نے تسلیم کرنے سے انکار کر دیا ہے جبکہ  عدالتی فیصلے پر متعدد ڈیموکریٹک ارکان کانگریس نے بھی اپنے تحفظات کا اظہار کیاہے۔

امریکی صدر جو بائیڈن کا کہنا ہے کہ اس فیصلے سے مجھ سمیت کئی امریکیوں کو غصہ اور تشویش ہوگی، مگر لوگوں کو یہ تسلیم کرنا چاہیے کہ اب جیوری فیصلہ سنا چکی ہے۔

عدالتی فیصلے کے بعد امریکا میں نسلی امتیاز پر نئی بحث چھڑ گئی ہے، اور امریکی معاشرہ نسلی بنیاد پر واضح طور پر تقسیم ہو کر رہ گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں