The news is by your side.

Advertisement

کرونا وبا سے بے روزگاری، عالمی رپورٹ نے سنگین صورت حال واضح کر دی

جنیوا: دنیا کے 219 ممالک اور خطوں کو اپنی مہلک گرفت میں لینے والی کو وِڈ نائنٹین کی عالم گیر وبا نے جہاں ایک طرف بے تحاشا انسانی جانیں تلف کیں، وہاں دوسری طرف زندہ رہنے والے انسانوں کے لیے شدید معاشی مشکلات بھی کھڑی کیں۔

عالمی مزدور تنظیم آئی ایل او نے اس سلسلے میں ایک رپورٹ جاری کی ہے، جس میں کہا گیا ہے کہ کرونا کی عالم گیر وبا سے گزشتہ برس دنیا بھر کو 255 ملین ملازمتوں کے مساوی بے روزگاری کا سامنا کرنا پڑا۔

آئی ایل او رپورٹ کے مطابق 25 کروڑ سے زائد مزدوروں کی بے روزگاری کے باعث 2021 میں اگر انسان دوست پالیسیاں اختیار نہ کی گئیں تو دنیا کو سست معاشی بحالی کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

انٹرنیشنل لیبر آرگنائزیشن کا کہنا ہے کہ بے روزگاری کی یہ تعداد 2009 کے عالمی مالیاتی بحران کے دوران بےروزگار ہونے والے افراد کے مقابلے میں 4 گنا زیادہ ہے۔

آئی ایل او کا یہ بھی کہنا ہے کہ وبائی مرض کی وجہ سے مردوں کی نسبت خواتین زیادہ متاثر ہوئی ہیں۔

واضح رہے کہ دنیا بھر کے دو سو انیس ممالک اور علاقوں میں اب تک کرونا وائرس انفیکشن کے باعث 21 لاکھ 40 ہزار انسان موت کے گھاٹ اتر چکے ہیں، جب کہ اس مہلک اور نہایت متعدی وائرس نے مجموعی طور پر 10 کروڑ انسانوں کو متاثر کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں