The news is by your side.

Advertisement

کراچی: صدر سے گرفتار ملزمان کا پڑوسی ملک کی ایجنسی سے تعلق کا انکشاف

ثنا اللہ عباسی کے مطابق ملزمان نے پڑوسی ملک کی ہدایت پر کراچی میں کئی افراد کو قتل کیا

کراچی:صدرسے گرفتار تین ملزمان نے دوران تفتیش حیران کن انکشافات کیے، تینوں ملزمان کئی برس سے پڑوسی ملک کے ایجنٹ کی حیثیت سے سرگرم تھے.

ایڈیشنل آئی جی سی ٹی ڈی ثنااللہ عباسی نے نے میڈیا کو بتایا کہ گذشتہ دنوں صدر سے گرفتار ملزمان برسوں سے کراچی میں‌ سرگرم تھے، وہ پڑوسی ملک کے ایجنٹ‌ کے طور پر کام کر رہے تھے.

ثنا اللہ عباسی کے مطابق ملزمان نے پڑوسی ملک کی ہدایت پر کئی افراد کو قتل کیا، ملزمان کراچی میں دہشت گردی اور دیگرجرائم کا اعتراف کرتے ہیں.

ایڈیشنل آئی جی سی ٹی ڈی نے بتایا کہ ملزمان میں یوسف رضا، معصوم نقوی، اکبرعلی شامل ہیں، یوسف رضا گروہ کا سرغنہ ہے، جو بہ یک وقت دو ایجنسیوں کے لئے کام کررہا ہے.

ثنا اللہ عباسی نے کہا کہ مرکزی ملزم جھنگ کا رہائشی ہے، وہ کراچی ابوالحسن اصفہانی روڈ پررہتا تھا، ملزم متعدد بار افغانستان ایران آتا جاتا رہا ہے.

ثنا اللہ عباسی نے کہا کہ یوسف رضا کا فرضی نام مونی پرویزتھا، ملزم نیٹوکنٹینر لےجانے والی کمپنی میں ملازم بن کر کابل گیا تھا.


عمران فاروق قتل کیس: 3 ملزمان پرفرد جرم عائد


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں