The news is by your side.

Advertisement

اوورسیز پاکستانیوں‌ کی بھیجی گئی رقومات میں‌ 33 کروڑ ڈالر کی کمی

اسلام آباد: بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کی جانب سے وطن بھیجی گئی رقم میں مزید کمی آگئی،پہلے 9ماہ میں ترسیلات زر میں 33 کروڑ ڈالر کی کمی واقع ہوئی۔

اطلاعات کے مطابق سعودی عرب، دبئی، متحدہ عرب امارات، امریکا، برطانیہ، آسٹریلیا سمیت دنیا بھر کے ممالک میں مقیم پاکستانی شہریوں کی جانب سے وطن بھیجی گئیرقوم میں مزید کمی آگئی۔

اعدادو شمار کے مطابق رواں سال کے پہلے 9 ماہ میں ترسیلات زر کا حجم 14 ارب5 کروڑ ڈالر رہا جب کہ گزشتہ سال کے دوران اسی مدت میں 14 ارب 38 کروڑ ڈالر کی رقم بھیجی گئی۔


یہ پڑھیں: اوورسیز پاکستانیوں کی بھیجی گئی رقومات میں‌ کمی


قبل ازیں اقتصادی ماہرین نے کہا تھا کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے کی وضع کی جانے والی سخت پالیسیوں اور تیل کی گرتی ہوئی عالمی قیمت کی وجہ سے مستقبل میں امریکا اور سعودی عرب میں مقیم پاکستانیوں کی جانب سے ترسیلات زر میں مزید کمی آسکتی ہے۔

خیال رہے کہ دنیا بھر میں مقیم پاکستانی ان ممالک کی کرنسی میں ہی رقم وطن بھیجتے ہیں جیسے خلیجی ممالک کے افراد ریال اور درہم جب کہ امریکا، برطانیہ و یورپ میں مقیم پاکستانی ڈالر، پاؤنڈ اور یورو میں رقم بھیجتے ہیں تاہم تمام رقم کا حساب کتاب ڈالر کے حساب سے کیا جاتا ہے۔

اسی کی وجہ یہ ہے کہ پاکستان کا زر مبادلہ بھی ڈالر کی شکل میں ہی شمار کیا جاتا ہے اسی اعتبار سے ریمی ٹینسز کو بھی شمار کیا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: اوورسیز پاکستانیوں سے زائد فیس کی وصولی،چیف جسٹس کا نوٹس

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں