The news is by your side.

Advertisement

کراچی کے 50 فی صد ٹریفک سگنلز خراب، چالان کے 80 کروڑ کہاں گئے؟

کراچی: 80 کروڑ کا چالان کرنے والی ٹریفک پولیس کی سگنل بحالی میں عدم دل چسپی سامنے آ گئی ہے، شہر کی اہم شاہراہوں پر لگے 50 فی صد سے زائد ٹریفک سگنلز خراب ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کی اہم شاہراہوں پر پچاس فی صد سے زیادہ ٹریفک سگنلز خراب ہیں، جس پر ٹریفک انجینئرنگ ڈپارٹمنٹ نے تحریری لیٹر لکھ کر جان چھڑا لی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے نمایندے کا کہنا ہے کہ ٹریفک پولیس نے چالان کے نام پر شہریوں کی جیب سے 80 کروڑ روپے نکالے، سوال یہ ہے کہ وہ کہاں گئے؟ ٹریفک پولیس حکام نے اس سلسلے میں خاموشی اختیار کر لی ہے۔

ٹریفک انجینئرنگ ڈپارٹمنٹ کے مطابق شہر میں لگے تقریباً 100 سگنلز میں سے 52 سگنلز کی مرمت درکار ہے، جب کہ سب سے زیادہ سگنلز ڈسٹرکٹ سٹی اور ساؤتھ میں خراب ہوئے ہیں، سٹی میں 19، ساؤتھ میں 17، ایسٹ میں 8 سگنل خراب ہیں، جب کہ سینٹرل میں 4، ملیر میں 3 اور ویسٹ میں ایک سگنل خراب پڑا ہوا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  کراچی والوں نے 70 کروڑ روپے ٹریفک پولیس کی نذر کردیے

اے آر وائی نیوز کے مطابق سگنلز خرابی کے باعث آئی آئی چندریگر روڈ، پریڈی اسٹریٹ، ایم اے جناح روڈ پر ٹریفک کی روانی میں خلل معمول بن گیا ہے، کراچی کے مختلف علاقوں میں بد ترین ٹریفک جام کی صورت حال بھی اس غفلت کا ثبوت ہے، دوسری طرف بند سگنل توڑنے پر شہریوں سے ہاتھوں ہاتھ جرمانہ وصول کیا جا رہا ہے، اہل کار جرمانہ نہ دینے والے سے نظرانہ وصول کرتے بھی نظر آتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں