The news is by your side.

Advertisement

سونے کے استرے سے بال کٹوانے کا رجحان بڑھنے لگا

بھارتی ریاست مہاشٹرا کے شہر پونے میں سونے کے استرے سے بال کٹوانے کا رجحان تیزی سے فروغ پارہا ہے۔

بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق پونے سے تعلق رکھنے والے حجام نے کرونا لاک ڈاؤن کے بعد اپنے کاروبار کو بڑھانے کے لیے ایک منفرد طریقہ استعمال کیا ہے۔

بھارتی ریاست مہارشٹرا کے شہر پونے سے تعلق رکھنے والے حجام نے گاہکوں کو متاثر  کرنے کے لیے سونے کا استرا استعمال کرنا شروع کردیا جس کے بعد اُن کی دکان پر پہلے سے زیادہ لوگ آنے لگے۔

سلون کے مالک اوینش بورنڈیا نے چار لاکھ بھارتی روپے مالیت کا استرا خریدا جس کو اب وہ گاہکوں کے بال کاٹنے اور شیو بنانے کے لیے استعمال کرتے ہیں۔

مالک نے بتایا کہ وہ سونے کے استرے سے بال کٹوانے یا شیو بنوانے والے افراد سے 100 روپے لیتے ہیں۔

اطلاعات ہیں کہ پونے میں قائم ہونے والے اس سلون کا افتتاح بھارت کی حکمراں جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی کے رکن اسمبلی گوپی چند نے حال ہی میں کیا تھا۔

مالک کا ماننا ہے کہ سونے کے استرے سے بال کٹوانے یا شیو بنوانے والے افراد خود کو دیگر سے منفرد سمجھتے ہیں، اس لیے اس کا رجحان دن بہ دن بڑھ رہا ہے اور گاہکوں کی تعداد میں اضافہ بھی ہورہا ہے۔

اوینش کا کہنا ہے کہ ’اس سہولت سے وہ عام افراد بھی فائدہ اٹھا سکتے ہیں جن کے پاس پیسے نہیں ہیں‘۔

اُن کا کہنا تھا کہ ’میرا خیال ہے 100 روپے زیادہ قیمت نہیں، کم پیسے رکھنے کی ایک وجہ یہ بھی تھی کہ سونے کے استرے سے تمام شہری فائدہ اٹھائیں‘۔

Comments

یہ بھی پڑھیں