The news is by your side.

Advertisement

کراچی: ڈاکوؤں کی فائرنگ سے پولیس اہلکار شہید

کراچی: شہر قائد کے علاقے جمالی پل کے قریب ڈاکوؤں نے فائرنگ کرکے پولیس اہلکار کو شہید کردیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق کراچی کے جمالی پل کا علاقہ وارداتوں کا مرکز بن گیا، لوٹ مار کرنے والے ڈاکوؤں نے پولیس اہلکار کی جان لے لی، شہید اہلکار کی شناخت شبیر احمد کے نام سے ہوئی۔

ایس ایس پی کے مطابق شہید اہلکار ساتھی کے ہمراہ 15 پر ڈکیتی کی اطلاع کے بعد پہنچے تھے۔

ایس ایس پی ایسٹ کا کہنا ہے کہ سپرہائی وے پر جمالی پل کے قریب ڈاکو لوٹ مار کررہے تھے پولیس کے پہنچنے پر فائرنگ کردی، پولیس اہلکار شبیر احمد کو سینے پر گولی لگی جس سے وہ موقع پر ہی جاں بحق ہوگئے۔

واضح رہے کہ جمالی پل کے اطراف لوٹ مار کی وارداتیں معمول بن چکی ہیں چند روز قبل بھی ڈاکوؤں نے لوٹ مار کے دوران شہری کو گولی مار دی تھی۔

مزید پڑھیں: نجی یونیورسٹی کے پروفیسر کا قتل : پولیس نے24 گھنٹے سے بھی کم وقت میں قاتل کو پکڑلیا

یاد رہے کہ گزشتہ روز کراچی کے علاقے نیو ٹاؤن کے قریب ڈاکوؤں کی فائرنگ سے نجی یونیورسٹی کے پروفیسر ظاہر علی سید جاں بحق ہوگئے تھے، ڈاکوؤں نے ظاہر علی سید سے گاڑی چھیننے کی کوشش کی تھی۔

ایسٹ زون پولیس نے آج کارروائی کرتے ہوئے پروفیسر ظاہر علی سید کے قاتل سمیت تین ملزمان کو گرفتار کیا تھا۔

ملزمان نے دوران تفتیش 22 وارداتوں کاانکشاف کرتے ہوئے بتایا تھا کہ سہولت کار زاکر ہر واردات کا50فیصد لیتا تھا، ملزم رستم پٹھان نے فائرکیا اور ابراہیم بنگالی موٹرسائیکل چلارہا تھا، گاڑی نہ روکنے پرفائرنگ کی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں