The news is by your side.

Advertisement

پلوشہ بشیر کو ماحور شہزاد پر تنقید مہنگی پڑ گئی

کراچی: قومی بیڈمنٹن چیمپئن مراد علی اور پلوشہ بشیر کو ماحور شہزاد پر تنقید مہنگی پڑ گئی۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق پاکستان بیڈمنٹن فیڈریشن نے قومی چیمپئن مراد علی اور پلوشہ بشیر پر دو سال کی پابندی عائد کردی، پلوشہ اور مراد علی نے ماحور شہزاد کے اولمپکس مقابلوں میں شرکت پر تنقید کی تھی۔

بیڈمنٹن فیڈریشن نے دونوں کھلاڑیوں پر دو سال تک ملکی و بین الاقوامی مقابلوں میں شرکت کرنے پر پابندی عائد کردی۔

واضح رہے کہ گزشتہ ماہ پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن کے اعلامیہ جاری کیا تھا جس میں بتایا گیا تھا کہ بیڈمنٹن پلیئر ماحور شہزاد کو ٹوکیو اولمپکس میں انوی ٹینشل پلیس مل گئی اور وہ اولمپکس میں پاکستان کی نمائندگی کریں گی۔

مزید پڑھیں: ماحور شہزاد کی دیرینہ خواہش پوری ہوگئی

ماحور شہزاد کا کہنا تھا کہ اولمپکس میں شرکت کا خواب پورا ہوگیا، ٹوکیو اولمپکس میں سبز ہلالی پرچم بلند کرنے کے لیے پرعزم ہوں۔

پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن کے صدر سید عارف حسن نے ماحور شہزاد کو اولمپکس کے لیے جگہ بنانے پر مبارکباد دیتے ہوئے کہا تھا کہ ماحور شہزاد پاکستان کی نمبر ون بیڈمنٹن پلیئر ہیں اور تیزی سے عالمی رینکنگ بھی بہتر بنا رہی ہیں وہ اولمپکس میں شرکت کی مستحق ہیں۔

ماحور شہزاد کا کہنا تھا کہ اگر گزشتہ ایک برس کے دوران بین الاقوامی ایونٹس میں شرکت کا موقع ملتا تو ٹاپ 100 میں آجاتی لیکن کورونا کی وجہ سے ممکن نہیں ہوا۔

ان کا کہنا تھا کہ میرا خواب سچ ثابت ہو گیا ہے مجھے یقین نہیں آرہا کہ میں اولمپکس میں پاکستان کی نمائندگی کروں گی، میں توقعات پر پورا اتروں گی اور سبز ہلالی پرچم بلند کروں گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں