The news is by your side.

Advertisement

کسان ملک کا اثاثہ ہیں، حکومت کسانوں کے ساتھ کھڑی ہے، وزیراعظم

بہاولپور: وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ کسان ہمارے ملک کا اثاثہ ہیں، وفاقی اور صوبائی حکومت کسانوں کے ساتھ ہر وقت کھڑی ہوگی۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے کسان کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کسان کارڈ کا اجرا کیا جارہا ہے اس کے ذریعے سبسڈی ملے گی، کسانوں کی مدد کرنا ان پر کوئی احسان نہیں بلکہ یہ ہمارا فرض ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے ملک میں کسانوں کی تعداد 84 لاکھ ہے، کسان محنت کش ہیں، ملک میں طاقتور کی حکمرانی رہی ہے، کسانوں کو مقررہ نرخ سے کم پیسے ملتے تھے، کسانوں کو اپنی محنت کا پھل نہیں ملتا تھا، طاقتور زیادہ پیسے کما رہا تھا، ہمارا وژن ہے کہ کسانوں کی کمائی کو دگنی کریں۔

وزیراعظم نے کہا کہ کسان کی کمائی دگنی کرنے سے فائدہ پاکستان کو ہوگا، کسان دگنا کمائے گا اور اپنی زمین پر لگائے تو پیداوار بھی زیادہ ہوگی، جتنی زیادہ پیداوار ہوگی کھانے پینے کی چیزوں کی قیمتیں نیچے آجائیں گی۔

عمران خان نے کہا کہ 22 کروڑ آبادی کے لحاظ سے ہی پیداوار بھی وقت کی ضرورت ہے، ہم اس وقت 40 لاکھ ٹن گندم امپورٹ کررہے ہیں، ہم نے پہلے کسان کی ٹیکنالوجی سے مدد کرنی ہے ان کو پیسہ دینا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جس ملک کے پاس 12 موسم ہوں وہ ہر چیز اگا سکتا ہے، ایسے ممالک بھی ہیں جنہوں نے تکنیکی طریقے سے ریگستان کو آباد کردیا۔

وزیراعظم نے کہا کہ ہم نے اپنے لوگوں کو غربت سے نکالنا ہے، جو ملک کمزور طبقے کو اوپر اٹھائے وہ ترقی کرتا ہے، چین آج دنیا کی سب سے بڑی پاور بننے جارہا ہے، آج سے 35 سال پہلے بھارت اور چین ایک جگہ پر کھڑے تھے، آج چین کو دیکھیں اور بھارت کو دیکھ لیں، بھارت میں غربت انتہا پر ہے۔

انہوں نے کہا کہ دیہات میں کسانوں کی مدد کرنے سے ملک خود خوشحال ہوتا جائے گا، پاکستان پہلے دو سال بہت مشکل حالات میں تھا اب درست سمت کی جانب گامزن ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں